20 سالہ نوجوان نکاح میں مزاحمت پر 6 سالہ بچی کو زبردستی لے گیا

20 سالہ نوجوان نکاح میں مزاحمت پر 6 سالہ بچی کو زبردستی لے گیا
20 سالہ نوجوان نکاح میں مزاحمت پر 6 سالہ بچی کو زبردستی لے گیا

  

خانیوال (ویب ڈیسک) 20 سالہ دولہا 6 سالہ بچی کو نکاح کے بغیر ہی زبردستی لے گیا۔ تفصیلات کے مطابق چک نمبر 123 سیون آر کے رہائشی محمد یار نے الزام عائد کیا ہے کہ گزشتہ دنوں وہ بھائیوں کو ملنے راولپنڈی گیا۔ بھتیجے طارہ عباس نے اطلاع دی کہ تمہاری بیوی عقیلہ بی بی، محمد عارف، بشیر احمد، محمد رمضان، شریف مل کر تمہاری 6 سالہ بیٹی کی شادی 20 سالہ غلام مرتضیٰ سے کررہے ہیں۔ نکاح خواں نے لڑکی نابالغ دیکھ کر نکاح پڑھانے سے انکار کردیا وہاں موجود محمد عارف، محمد نواز اور میری والدہ صباں بی بی نے روکا تو ملزمان بغیر نکاح کئے میری بیٹی کو اٹھا کر لے گئے۔ تھانہ تلمبہ پولیس نے ملزمان کو گرفتار بھی کیا لیکن ساز باز ہوکرچھوڑدیا۔

پاکستانی گاﺅں میں محنت کش کی اس نوجوان لڑکی نے وڈیرے کی خواہش پر اس سے شادی سے انکار کردیا گیا تو اس کے ماں باپ کے سامنے اس کے ساتھ کیا کام کردیا گیا؟ جان کر ہر پاکستانی کا دل خون کے آنسو روئے

مزید :

خانیوال -