انصاف کیلئے لڑتا رہوں گا ،اذلان خان

انصاف کیلئے لڑتا رہوں گا ،اذلان خان

لاہور (خصوصی رپورٹ) کشمالہ طارق کے بیٹے اذلان خان نے کہا کہ اپنے سکول کو ایشین گیمز میں میڈل جتوانے کا یہ صلہ ملتا ہے ،بالآخر میڈ یا جس کی سائیڈ لے وہ سچ بولتا ہے ،اب جاگ جاؤ کب تک پاگل بنو گے ،وہ کہتے ہیں انہوں نے مجھے سکول سے اس لیے نکالا کیونکہ میں نے لڑائی کی ،میں 12سال سے اس کالج میں ہوں اور پہلی مرتبہ میں نے کالج کا قانون توڑا ہے،مجھے اس بات پر وارننگ دی جانی چاہیے تھی ،نکالنے کے بجائے ۔اس کا کہنا تھا کہ آپ کیسا محسوس کریں گے کہ اگر لوگوں کے سامنے کوئی آپ کی ماں کو گالی دے ،آپ کو کیسا لگے گا اگر کوئی آپ کو بہن کی گالی دے آپ وہاں بیٹھ جائیں گے ،کیا آپ ایسا کریں گے۔یہ ہی میرے ساتھ بھی ہوا اور اس لڑائی میں شامل ہونے والے باقی تمام لڑکے سکول میں ہی ہیں ،صرف مجھے کیوں نکالا گیا،کیا یہ انصاف ہے ؟۔اذلان خان نے کہا کہ میڈ یا سکول کی طرف داری کر رہاہے ،اس کا یہ مطلب نہیں کہ میڈ یا صحیح ہے ،انہیں ابھی پردے کے پیچھے حقائق کا نہیں پتہ ۔اس کا کہنا تھا کہ میں اپنے لیے انصاف چاہتا ہوں اور اپنے حق کے لیے لڑوں گا اور میں لڑتا رہوں ،اس سے مجھے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ کوئی کیا سوچ رہا ہے ،میں انصاف کے لیے لڑتا رہوں گا ۔

مزید : صفحہ اول