کچہری چوک سے کمشنر آفس تک پارکنگ سٹینڈ ز ، ٹریفک جام ، لڑائی جھگڑے معمول

کچہری چوک سے کمشنر آفس تک پارکنگ سٹینڈ ز ، ٹریفک جام ، لڑائی جھگڑے معمول

ملتان(نیوز رپورٹر ) کچہری چوک سے کمشنر آفس تک پارکنگ سٹینڈز کی بھرمار ہو گئی ‘ ٹریفک گھنٹوں جام رہنا معمول بن کر رہ گیا ہے ‘ ضلع انتظامیہ کی جانب سے فلائی اوور کے نیچے پارکنگ مختص کرنے کے باوجود ڈسٹرکٹ بار کے وکلاء اپنی گاڑیاں بے خوفی سے سڑک پر پارک کرتے ہیں‘ جس کے باعث کچہری سے کمشنر آفس تک 40 فٹی سڑک سکڑ کر 20 فٹ ہو کر رہ گئی ہے جبکہ ٹریفک وارڈنز اس لاقانونیت کو کنٹرول کرنے کی بجائے بے بس و تماشائی بن کر رہ گئے (بقیہ نمبر23صفحہ12پر )

ہیں ۔ اس گھمبیر صورتحال نے کچہری چوک کو مسائلستان بنا کر رکھ دیا ہے ‘ گاڑیوں کی ٹریفک ک گھنٹوں جام رہنے اور پیدل چلنے والے شہریوں کو پہنچنے والی اذیت کے باوجود ڈسٹرکٹ بار کے وکلاء کے کان پر جوں نہیں رینگی ہے اور نہ ہی ڈسٹرکٹ بار عہدیداران نے اپنی برادری کو اس لاقانونیت کے فروغ کو روکنے کیلئے کوئی موثر کردار ادا کرنے کی اخلاقی جرات کی ہے افسوسناک امر ہے کہ کمشنر ملتان ‘ ڈی سی ملتان کچہری میں موجود ججز اور ٹریفک وارڈنز حکام بھی روزانہ اس اذیت کا سامنا کرنے کے اور مشاہدے کے باوجود خاموشی اختیار کیے ہوئے ہیں ۔ شہریوں کو انصاف فراہم کرنے کے دعویداروں نے کچہری چوک کے اطراف غیر قانونی پارکنگ کو معمول بنا کر اپنے ہی دعوؤں کی نفی کر رکھی ہے ۔ شہریوں نے کمشنر ‘ ڈی سی ملتان سمیت پولیس اور ٹریفک حکام سے استدعا کی ہے کہ وکلاء بار کے عہدیداروں سے مذاکرات کر کے کچہری روڈ کو وکلاء کے غیر قانونی قبضہ سے واگزار کروایا جائے تاکہ ٹریفک میں روانی اور شہریوں کو آمد ورفت میں آسانی ہو۔

ٹریفک جام

مزید : ملتان صفحہ آخر