” احتساب عدالت کا فیصلہ مفروضوں پر مبنی ہے اور ۔۔“ دکھ کی گھڑی میں اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوازشریف کو خوشخبری دیدی

” احتساب عدالت کا فیصلہ مفروضوں پر مبنی ہے اور ۔۔“ دکھ کی گھڑی میں اسلام ...
” احتساب عدالت کا فیصلہ مفروضوں پر مبنی ہے اور ۔۔“ دکھ کی گھڑی میں اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوازشریف کو خوشخبری دیدی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )اسلام آباد ہائیکورٹ میں گزشتہ روز نوازشریف ،مریم نواز اور کیپٹن صفدر کی سزا معطلی کی درخواستوں پر سماعت ہوئی جس دوران جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ ہم نے ٹرائل کورٹ کے فیصلے کو دیکھنا ہے جو خود کہتاہے کہ وہ مفروضے پر مبنی ہے ، مفروضے کی بنا پر کریمنل سرزا برقرار نہیں رہ سکتی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق جسٹس اطہر من اللہ کا کہناتھا کہ سزائیں بے نامی دار پر ہوئی ہیں بلکہ زیر کفالت پر نہیں ، مریم نواز کو ٹرائل کورٹ نے بینی فیشل اونر قرار دیاہے اور والد کی پراپرٹی چھپانے پر سزاہوئی ، مریم نواز کا کردار تو تب سامنے آئے گا جب نوازشریف کا اس پراپرٹی سے تعلق ثابت ہوگا ،ہم نے ٹرائل کورٹ کے فیصلے کو دیکھنا ہے جو خود کہتاہے کہ وہ مضروضے پر مبنی ہے ، مفروضے کی بنا پر کریمنل سز ا برقرار نہیں رہ سکتی ۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز لندن میں بیگم کلثوم نوازشریف انتقال کر گئیں جن کی میت کو پاکستان لانے کیلئے شہبازشریف لندن پہنچ گئے ہیں ، کلثوم نواز کی نماز جنازہ جمعہ کے روز شام پانچ بجے جاتی امراءمیں ادا کی جائے گی جبکہ ان کی نماز جنازہ مولانا طارق جمیل پڑھائیں گے اور ان کی تدفین بھی میاں محمد شریف کے پہلے میں جاتی امراءمیں ہی کی جائے گی ۔ بیگم کلثوم نواز کی آخری رسومات میں شرکت کیلئے حکومت نے نوازشریف ،مریم نواز اور کیپٹن صفدر کو پانچ روز کے پے رول پر رہا کر دیاہے ۔

مزید : قومی