غیرملکی ماڈل ٹریزا ہیلسکی منشیات سمگلنگ کیس میں سیشن عدالت پیش، کسٹم انسپکٹر کا بیان قلمبند نہ ہوسکا، سماعت 18 ستمبر تک ملتوی

غیرملکی ماڈل ٹریزا ہیلسکی منشیات سمگلنگ کیس میں سیشن عدالت پیش، کسٹم ...
غیرملکی ماڈل ٹریزا ہیلسکی منشیات سمگلنگ کیس میں سیشن عدالت پیش، کسٹم انسپکٹر کا بیان قلمبند نہ ہوسکا، سماعت 18 ستمبر تک ملتوی

  

لاہور (ویب ڈیسک) غیر ملکی خوبرو ماڈل ٹریزا ہیلسکی منشیات سمگلنگ کیس میں سیشن عدالت میں پیش ہوئیں، عدالت میں غیرملکی ماڈل کو رنگے ہاتھوں گرفتار کرنے والے کسٹم انسپکٹر کا بطور گواہ بیان قلمبند نہیں کیا جاسکا اور فاضل عدالت نے کیس کی سماعت 18 ستمبر تک ملتوی کر دی۔

عدالت میں پیش ہونے والی21 سالہ ٹریزا ہیلسکی کا تعلق یورپی ملک جمہوریہ چیک سے ہے، رواں برس لاہور ایئر پورٹ سے متحدہ عرب امارات جاتے ہوئے اسے اس وقت گرفتارکیا گیاتھا جب اس کے سامان سے 9 کلوگرام منشیات برآمد ہوئی تھی۔ ٹریزا بھی منشیات سمگلنگ کی کوشش کا اعتراف جرم کرچکی ہیں اور معاملہ عدالت میں زیرسماعت ہے۔ دوسری جانب عدالت میں پیشی کے دوران ٹریزا اپنی سج دھج کے باعث سائلین اور عملے کی مرکزنگاہ بن گئیں۔ لوگ اسکی ویڈیو بناتے رہے وکیل اور پولیس اہلکاروں کے ہمراہ آتے ہوئے جب ٹریزا نے دیکھا کہ ان کی وڈیو بنائی جارہی ہے تو وہ اس انداز سے مسکراتی رہیں کہ جیسے وہ عدالت میں پیشی پر نہیں بلکہ شوٹنگ کے لئے جارہی ہوں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور