دبئی میں پاکستانی لڑکے کو اپنے ہم وطن پر بھروسہ کرنا بہت مہنگا پڑا، ایسی شرمناک ترین خبر آگئی کہ جان کر ہر پاکستانی کو غصہ چڑھ جائے

دبئی میں پاکستانی لڑکے کو اپنے ہم وطن پر بھروسہ کرنا بہت مہنگا پڑا، ایسی ...
دبئی میں پاکستانی لڑکے کو اپنے ہم وطن پر بھروسہ کرنا بہت مہنگا پڑا، ایسی شرمناک ترین خبر آگئی کہ جان کر ہر پاکستانی کو غصہ چڑھ جائے

  

دبئی سٹی(مانیٹرنگ ڈیسک) دیار غیر میں بسنے والوں کے لئے سب سے بڑا سہارا اپنے وطن کے لوگ ہی تو ہوتے ہیں، لیکن اگر ہم وطن ہی دغا دے جائے تو اس سے بڑھ کر دُکھ کی بات کیا ہو سکتی ہے۔ دبئی میں مقیم ایک بے حس پاکستانی نوجوان نے بھی کچھ ایسی ہی بے حیائی کا مظاہرہ کیا۔ ایک نوعمر پاکستانی لڑکے سے فیس بک پر دوستی کی اور پھر موقع ملتے ہی اس کی عصمت دری کر ڈالی۔

گلف نیوز کے مطابق دبئی کی عدالت کو بتایا گیا ہے کہ پاکستانی نوجوان نے اپنے ہم وطن 13 سالہ لڑکے سے فیس بک کے ذریعے دوستی کر رکھی تھی اور المراکبت کے علاقے میں جمعہ کی نماز کے بعد ان کی پہلی ملاقات اتفاقاً ہوئی تھی۔ گاڑی میں بیٹھے نوجوان نے اپنے فیس بک فرینڈ لڑکے کو دیکھا تو اسے اپنے پاس بلا لیا اور مختصر بات چیت کے بعد اپنے ساتھ چلنے کی پیشکش کی، مگر بیچارے لڑکے کو کیا معلوم تھا کہ اس بدبخت کے ذہن پر شیطان سوار تھا۔

متاثرہ لڑکے نے پولیس کو دئیے گئے بیان میں بتایا کہ ”گاڑی میں تین افراد تھے جن میں سے ایک میرا فیس بک فرینڈ تھا۔ اس نے مجھے اپنے ساتھ گھومنے پھرنے کی پیشکش کی جسے میں نے قبول کر لیا۔ ہم نے راستے میں ایک جگہ پیزا خریدا اور پھر العویر کے علاقے کی جانب روانہ ہوگئے۔ ایک جگہ انہوں نے گاڑی روک دی اور میرا فیس بک فرینڈ مجھے برہنہ ہونے پر مجبور کرنے لگا۔ جب میں نے انکار کیا تو وہ زبردستی پر اُتر آیا۔ اس نے اپنے دوستوں کے سامنے میری عصمت دری کی، جبکہ اس کا ایک دوست بھی میرے بوسے لیتے رہا۔ بعدازاں وہ مجھے گر گھر چھوڑ گئے اور دھمکی دی کہ اگر کسی کو بتایا تو اس کے نتائج اچھے نہیں ہوں گے۔“

متاثرہ لڑکے نے اس دھمکی کو نظر انداز کرتے ہوئے اپنے ساتھ پیش آنے والے واقعے کے متعلق اپنی والدہ کو آگاہ کیا، جس نے پولیس سے رابطہ کیا۔ پولیس نے 27 سالہ ملزم اور اس کے 32 سالہ دوست کو گرفتار کر لیا، کیونکہ مذکورہ دوست پر بھی الزام ہے کہ اس نے لڑکے کے بوسے لئے تھے۔ دونوں ملزمان الزامات تسلیم کرنے سے انکاری ہیں تاہم ان کے خلاف مقدمے کی کارروائی جاری ہے اور اگلی سماعت 2 اکتوبر کے روز ہوگی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /عرب دنیا