کیا آپ کو معلوم ہے خواتین کی جینز کی جیب مردوں کی جینز سے چھوٹی کیوں ہوتی ہے؟ جانئے

کیا آپ کو معلوم ہے خواتین کی جینز کی جیب مردوں کی جینز سے چھوٹی کیوں ہوتی ہے؟ ...
کیا آپ کو معلوم ہے خواتین کی جینز کی جیب مردوں کی جینز سے چھوٹی کیوں ہوتی ہے؟ جانئے

  

مانچسٹر(نیوز ڈیسک)آج کل کے دور میں جیب لباس کا لازمی حصہ ہے مگر اہل مغرب کے ہاں پندرہویں صدی کے زمانے تک لباس پر جیب نہیں ہوتی تھی بلکہ ضروری اشیاءرکھنے کے لئے لباس کے ساتھ الگ سے ایک گُتھلی لٹکائی جاتی تھی۔ اٹھارہویں صدی میں مردوں کے ملبوسات میں تو جیب کا اضافہ مگر خواتین کے ملبوسات ماضی قریب تک اس سہولت سے محروم رہے۔ وہ اپنی ضروری اشیاءپرس وغیرہ میں ساتھ رکھتی تھیں، جیسا کہ اب بھی عام دیکھنے کو ملتا ہے۔

خواتین نے جب پتلون پہننے کا آغاز کیا تو یہ پہلا موقع تھا کہ انہیں بھی جیب کی سہولت میسر آئی۔ شروع میں یہ مردانہ جیب جیسی ہی تھی مگر آج کی مردانہ اور زنانہ جینز کو دیکھیں تو ان کی جیب کا فرق واضح نظر آئے گا۔ ہوا کچھ یوں کہ مردانہ لباس کی بڑی جیبیں خواتین کو بالکل پسند نہیں آئیں اور آہستہ آہستہ ان کا سائز چھوٹا ہوتا چلا گیا، مگر یہ کچھ زیادہ ہی چھوٹا ہو گیا۔

حال ہی میں کی گئی ایک تحقیق میں یہ انکشاف سامنے آیا ہے کہ خواتین کی جینز کی جیبیں مردانہ جینز کی جیبوں کی نسبت تقریباً 48 فیصد چھوٹی ہوتی ہے، یعنی یہ سائز میں تقریباً آدھی ہوتی ہیں۔تحقیق کے مطابق مردانہ جینز پر جیب کا سائز اوسطاً 9x6.5انچ تھا جبکہ زنانہ جینز پر جیب کا سائز اوسطاً 6x5.6 انچ تھا۔ سچ تو یہ ہے کہ خواتین کی جینز پر جیب اتنی چھوٹی ہوتی ہے کہ اس میں کو ئی ڈھنگ کی چیز رکھنا ممکن نہیں، مگر کیا کہہ سکتے ہیں کیونکہ یہ خواتین کا اپنی پسند اور اُن کا اپنا فیصلہ ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس