”خورشید شاہ کے بیان سے توہین ۔۔۔“ ترجمان پیپلز پارٹی مولابخش چانڈیو کی بات سن کر خود چیف جسٹس ثاقب نثار بھی خوش ہوجائیں گے

”خورشید شاہ کے بیان سے توہین ۔۔۔“ ترجمان پیپلز پارٹی مولابخش چانڈیو کی بات ...
”خورشید شاہ کے بیان سے توہین ۔۔۔“ ترجمان پیپلز پارٹی مولابخش چانڈیو کی بات سن کر خود چیف جسٹس ثاقب نثار بھی خوش ہوجائیں گے

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پیپلز پارٹی کے ترجمان مولابخش چانڈیونے کہاہے کہ خور شید شاہ کے بیان سے چیف جسٹس کی توہین نہیں ہوئی ، چیف جسٹس اپنے فرائض منصبی کے ساتھ عوامی بھلائی کے لئے کوئی اور کام بھی کرتے ہیں تو اس میں کوئی ایسی بات نہیں ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”دنیا کامران خان کے ساتھ“ میں گفتگو کرتے ہوئے مولابخش چانڈیو نے کہا کہ خورشید شاہ کے بیان میں چیف جسٹس کی کوئی توہین نہیں ہوئی ۔ انہوں نے جو الفاظ استعمال کئے اس میں انہوں نے چیف جسٹس کی ذات یا عدالتی کارکردگی سے متعلق کوئی رائے زنی نہیں کی ۔ چیف جسٹس اگر اپنی منصبی ذمہ داریوں کے ساتھ ساتھ عوام کی بھلائی کیلئے کوئی اور کام بھی کرنا چاہتے ہیں تو اس میں کوئی ایسی بات نہیں ہے ۔ ہمیں اتنی چھوٹی چھوٹی باتوں کو ایشو نہیں بنانا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ چیف جسٹس کا ڈیم بنانے کافیصلہ حکومت کی ناکامی ہے ۔ یہ ذمہ داری حکومت کی ہے اور یہ بدقسمتی ہے کہ ہماری حکومتیں ذمہ داریاں پوری نہیں کرتیں۔ ڈیم بنانا حکومتوں کا کام ہوتاہے عدالتوں کا نہیں ہوتا لیکن کام نہ کرنے کی وجہ سے چیف جسٹس نے عوام کی بھلائی کے لئے یہ اقدام کیاہے ، ہم نے ڈیم بنانے کیلئے پہل کی ہے اس لئے ہی بھاشا ڈیم بننے کا ماحول بناہے ۔ انہوں نے کہاکہ ہمارے بارے میں سب سے سخت فیصلہ بھٹو صاحب کا تھا لیکن اس کے باوجود ہم نے لوگوں کو ججوں کے خلاف ابھارا نہیں اور نہ ہی سپریم کور ٹ کے سامنے کھڑے ہوکر گالیاں دیں۔ انہوں نے کہا کہ عدالت کے فیصلے کے بعد راضی یا ناراضی کا ہمارا فطری حق ہے ۔

مزید : قومی