ایم کیو ایم لندن ہو یا پاکستان ؟اِنہوں نے کبھی کراچی کی عوام کا ساتھ نہیں دیا:وقار مہدی

ایم کیو ایم لندن ہو یا پاکستان ؟اِنہوں نے کبھی کراچی کی عوام کا ساتھ نہیں ...
ایم کیو ایم لندن ہو یا پاکستان ؟اِنہوں نے کبھی کراچی کی عوام کا ساتھ نہیں دیا:وقار مہدی

  



کراچی (این این آئی)پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کے جنرل سیکریٹری وقار مہدی نے میئر کراچی وسیم اخترکے آرٹیکل 149 (4) کی حمایت پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایم کیو ایم لندن ہو یا پاکستان ؟یہ ان کا وطیرہ رہا ہے کہ اِنہوں نے کبھی کراچی کی عوام کا ساتھ نہیں دیا اور نہ ہی کبھی کراچی کی ترقی اور عوام کی فلاح وبہبود کیلئے کوئی کام کیا ہے،ایم کیو ایم نے ہمیشہ مفاد پرستی کی سیاست کی اوراپنے ووٹروں کو دھوکہ دیا ہے،تین دہائیوں سے ہمیشہ حکومتوں کاآلہ کار بن کر رونے دھونے کے سوا ایم کیو ایم نے کچھ بھی نہیں کیا،کراچی کی باشعور عوام جانتی ہے کہ ایم کیو ایم آرٹیکل 149 (4) کی حمایت کر کے سندھ میں تفریق کی سیاست پر عمل پیرا ہے۔

 پیپلز پارٹی سندھ کے جنرل سیکریٹری وقار مہدی نے کہا کہ سندھ حکومت نے کے ایم سی کو نالوں کی صفائی کیلئے 50 کروڑ اور ڈی ایم سی کو 44کروڑ روپے دیئے، میئر صاحب بتائیں کہ یہ 94کروڑ کی رقم ایم کیو ایم کے میئر اور چیئرمینوں نے کہاں خرچ کی ہے اور کونسے نالے صاف کئے ہیں جبکہ ایم کیو ایم کی اتحادی پی ٹی آئی کے وفاقی وزیر کہتے ہیں کہ نالے ہم نے کراچی سے چندہ اکٹھا کر کے صاف کئے جبکہ ان چندوں کا بھی کوئی جواب دینے کو تیار نہیں ہے۔ وقار مہدی نے کہا کہ ایم کیو ایم اور پی ٹی آئی طے کر لے کہ کس نے نالے صاف کئے اور عوام کا پیسہ کس کی جیب میں گیا ہے؟۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی اور اس کی صوبائی حکومت وفاقی حکومت کی گیڈر بھبکیوں میں نہیں آئے گی،وفاقی حکومت اور اس کے وزیر کراچی کے عوام کے جذبات سے نہ کھلیں، مودی کی طرح کراچی کو غیر قانونی اور آمرانہ ہتھکنڈوں سے فتح کرنے کے خواب چھوڑ دیں۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی


loading...