شہر میں عمارتیں گرنے کے واقعات تشویشناک ہیں،محمد فیصل

شہر میں عمارتیں گرنے کے واقعات تشویشناک ہیں،محمد فیصل

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)کریڈو ویلفیئر ایسوسی ایشن کے نائب صدر،معروف سماجی رہنما محمد فیصل نے کراچی میں تواتر کے ساتھ عمارتیں گرنے کے واقعات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بے گناہ انسانی جانوں کے ضیاع کے ذمہ دا ر ایس بی سی اے کے نااہل افسران ہیں۔حکومت فوری طور پر شہر قائم غیر قانونی تعمیرات کے حوالے سے سروے کرے تاکہ مستقبل میں اس طرح کے نقصانات سے بچا جاسکے۔ہفتہ کو جاری بیان میں محمد فیصل نے کہا کہ کورنگی اللہ والا ٹاؤن میں عمارت زمین بوس ہونے کا واقعہ انتہائی افسوسناک ہے۔ کراچی میں ایس بی سی اے کی نااہلی کے باعث عمارتیں گرنے کے واقعات میں اضافہ ہوگیا ہے۔ رواں برس کے دوران کراچی میں کسی رہائشی عمارت کے گرنے کا یہ چوتھا واقعہ ہے لیکن متعلقہ حکام کے کانوں میں جوں تک نہیں رینگ  رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ کورنگی اللہ والا ٹان میں پیش آنے والا واقعہ انتہائی افسوسناک ہے۔اب یہ بات واضح ہوچکی ہے کہ زمین بوس ہونے والی عمارت غیر قانونی تھی۔عمارت کی زمین کے نقشے سے ظاہر ہوتاہے کہ عمارت غیرقانونی ہونے کے باوجود ایس بی سی اے نے کوئی ایکشن نہ لیا۔محمد فیصل نے کہا کہ ایس بی سی اے کے حکام نے شہریوں کی زندگیوں کو دا ؤپر لگادیا ہے۔سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے افسران بھاری رقوم لیکر نقشے پاس کر کے ایسی غیر قانونی تعمیرات کراتے ہیں جس طرح کورنگی اللہ والا ٹان میں عمارتیں تعمیر کرائی گئی جو منہدم ہو چکی ہیں۔ انہوں نے  کہا کہ کراچی میں غیر قانونی تعمیرات میں ملوث سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی و دیگر محکموں کے ذمہ داروں کیخلاف فوری کارروائی ہونی چاہئے تاکہ اس قسم کے واقعات رونما نہ ہوں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -