چڑیا گھر تونسہ کے ملازمین کا تنخواہوں  کی عدم ادائیگی پر شدید احتجاج

چڑیا گھر تونسہ کے ملازمین کا تنخواہوں  کی عدم ادائیگی پر شدید احتجاج

  

 قصبہ کالا(نمائندہ پاکستان)چڑیا گھر تونسہ شریف ملازمین کی تنخوائیں 30ماہ سے بند،گھروں میں فاقے،ملامین کا احتجاج،وزیر اعلی پنجاب سے نوٹس لینے کی اپیل۔تفصیلات کے مطابق 20مارچ 2017کو چڑیا گھر تونسہ(بقیہ نمبر14صفحہ 6پر)

 شریف کیلئے ملازمین کی بھرتی ہوئی بھرتی کے بعد چڑیا گھر فعال نہ ہونے پر ملازمین کو ڈیوٹی کیلئے ڈیرہ غازی خان بھیج دیا گیا اور ملازمین کو صرف تین ماہ کی  تنخواہیں دیکر کر دی گئیں اور ان کو چھٹی کرادی گئی  جس کی وجہ سے ملازمین کو شدید مشکلات کا سامنا ہے اس کے علاوہ ملامین کو آرڈر 24اپریل 2017کو ہوئے مگر ملازمین کو تنخوائیں 20مارچ 2018کو دی گئیں باقی رقم خود ہڑپ کر گئے اب چڑیاگھر تونسہ شریف کو فعال کیا جا رہا ہے لہزا وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار نوٹس لیتے ہوئے ملازمین کی بحالی اور تنخوائیں ادا کرنے کے احکامات جاری کرائیں۔

تنخواہیں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -