سنتھیا رچی کیس، رحمان ملک کی معاون وکیل کی التوا درخواست منظور

  سنتھیا رچی کیس، رحمان ملک کی معاون وکیل کی التوا درخواست منظور

  

 اسلام آباد(آئی این پی) امریکی بلاگرسنتھیا رچی کیس میں رحمان ملک کی جانب سے معاون وکیل کی التوا کی درخواست منظور کر لی گئی۔ عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آئندہ تاریخ پرحتمی دلائل ہوں گے اورکیس کا فیصلہ کردیں گے۔ تفصیلات کے مطابق (بقیہ نمبر29صفحہ 6پر)

امریکی بلاگرسنتھیا رچی کی رحمان ملک کے خلاف بداخلاقی کا مقدمہ درج کرانے کی درخواست پرایڈیشنل سیشن جج عطا ربانی نے سماعت کی۔ سماعت کے دوران معاون وکیل رحمان ملک نے کہا کہ ہائی کورٹ کے آرڈرکے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع کررکھا ہے۔ عدالتی کارروائی رکوانے کے لیے ہائی کورٹ سے بھی حکم امتناع کی درخواست کررکھی ہے۔ دونوں درخواستوں پرعدالتوں کے آرڈرکا انتظارکرلیا جائے۔ عدالت نے ریمارکس دیئے کہ ہائی کورٹ کی ہدایات کے مطابق کیس کا فیصلہ تین ہفتے میں کرنا ہے۔ آئندہ تاریخ پرحتمی دلائل ہوں گے اورکیس کا فیصلہ کردیں گے۔ اگرکسی کورٹ کا سٹے آرڈر ہے تو آئندہ سماعت تک جمع کرائیں۔ رحمان ملک کی جانب سے معاون وکیل کی التوا کی درخواست منظورکرتے ہوئے سماعت21 ستمبر تک ملتوی کردی۔ دوسری جانب ایڈیشنل سیشن جج فیضان حیدرگیلانی نے سنتھیارچی کے خلاف زنا کی تہمت پردائرقذف کمپلینٹ پرسماعت کی۔ کیس سے بریت کی درخواست پر دلائل نہ ہوسکے۔ کمپلیننٹ کے وکیل کی جانب سے بریت کی درخواست کی مخالفت میں دلائل کے لیے مہلت کی استدعا منظورکرلی گئی جبکہ رحمان ملک کے وکیل کو آئندہ سماعت پربریت کی درخواست پردلائل کی ہدایت بھی کی گئی۔

سنتھیا رچی کیس

مزید :

ملتان صفحہ آخر -