موٹر وے پر خاتون سے بداخلاقی شرمناک‘ دنیا  بھر میں ملک کی جگ ہنسائی ہوئی‘ مختیارا مائی

موٹر وے پر خاتون سے بداخلاقی شرمناک‘ دنیا  بھر میں ملک کی جگ ہنسائی ہوئی‘ ...

  

 جام پور (نامہ نگار) موٹر وے گجر پورہ میں خاتون کے ساتھ ہو نے والا واقعہ شرمناک واقعہ ہے۔ مجرمان کو سرے عام پھانسی دی جائے۔ میں اٹھارہ سال تک جہدوجہد کی۔ ایسے واقعات سے پاکستان کی دنیا بھر جگ(بقیہ نمبر38صفحہ 7پر)

 ہنسائی ہورہی ہے۔پولیس اور عدالتی نظام میں خرابیوں کی وجہ سے آج کسی بھی خاتون کو انصاف نہ ملا۔ اللہ سے امید کی جاسکتی تاہم موجودہ حکمرانوں سے کوئی انصاف کی امید نہیں ہوسکتی۔ یہ بات بین الاقوامی شہرت یافتہ مختیا راں مائی نے میڈ یا سے لاہور کے واقعہ پر گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی پنجاب کے اپنے علاقہ تونسہ میں بھی آئے روز واقعات ہو رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جب خود متاثرہ خاتون بیان دے رہی ہے کہ مجھ سے بد اخلاقی ہو رہی تو پھر اس کیس کے گواہ کی کیاضرورت ہے۔ پولیس گواہوں میں الجھا کرکے کیس کو ختم کر دیتی ہے پھر عدالتوں  سے ملزمان بری ہوجاتے ہیں جب تک ملزمان کو سرے عام پھانسی نہ ہو گی ایسے واقعات نہیں رک سکتے۔موٹر وے سے کونسی جگہ محفوظ ہے۔ گھر میں جب واقعات ہو رہے ہوں تو تب پولیس بھی منٖفی رویہ اپناتی ہے۔ سی سی پی او لاہور عمر شیخ نے بیان دے کرکے پولیس اور پنجاب حکومت کے اصل چہرے عیاں کر دیے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں کہا کہ دوہزار دو کے میرے واقعہ اور دوہزار بیس میں کیا فرق رہ گیا۔ کب تک ایسے واقعات ہوتے رہیں گے۔ ہمارا گناہ صرف اتنا ہے کہ ہم عورت ہیں۔ انہوں نے کہا کہ موٹر وے واقعہ پر متاثرہ خاتون زندگی بھر اپنے بچوں کے سامنے شرمندہ رہے گی۔ ایسا کام تو غیر مذہب بھی نہیں کرتے۔

مختیارا مائی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -