عمران وزیراعظم بن کر بھی کنٹینر سے نہیں اترے، مولانا عبدالرشید

عمران وزیراعظم بن کر بھی کنٹینر سے نہیں اترے، مولانا عبدالرشید

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
 وہاڑی(نامہ نگار)مرکزی جمیعت اہلحدیث پنجاب کے امیر مولانا عبدالرشید حجازی ناظم اعلی پنجاب مولانا محمد یونس آزاد سرپرست اعلی پنجاب سبطین شاہ نقوی نے(بقیہ نمبر1صفحہ6پر)
 مرکزی جمیعت اہلحدیث کے ضلعی امیر حافظ غلام اللہ محمدی دیگر عہدیداروں قاری عبداللہ طیب پروفیسر ڈاکٹر عبدالرحمان شارق،مولانا ظفر اللہ خان،سیف اللہ عابد،ڈاکٹر عامر رشید امیر شیخ عرفان حافظ اسداللہ اسلم کے ہمراہ پریس کانفرس میں کہا ہے کہ افغانستان میں پرامن طور پر غیر ملکی افواج کا انخلا طالبان کی کامیابیوں اور نئی افغان حکومت کے قیام میں ریاست پاکستان کا انتہائی موثر کردار ہے عمران خان وزیراعظم بن کر بھی کنٹینر سے نہیں اترے انکے غیر ذمہ دارانہ بیانات سے ملکی و قومی سطح پر مسائل بڑھے ہیں وطن عزیز کا ہر باسی حکومت کی ناقص کارکردگی سے پریشان مہنگائی نے غریب کی کمر توڑ کر رکھ دی ہے ان کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے ہو چکے ہیں ڈی ایس پی بوریوالا نے اہلحدیث مکتبہ فکر سے توہین آمیز رویہ پر فوری معذرت کرکے ذمہ داروں کے خلاف کاروائی یقینی نہ بنائی تو لاہور میں آئی جی پنجاب پولیس اور چیف سیکرٹری کے دفاتر کے سامنے احتجاجی مظاہرے کیے جائیں گے جس کی تمام تر ذمہ داری ڈی پی او وہاڑی پر عائد ہوگی رہنماں نے مزید کہا کہ کرپشن ختم کرنے اور مثبت تبدیلیاں لانے کے راگ الاپ کر اقتدار میں آنے والی پی ٹی آئی کے دور میں کرپشن مزید بڑھ گئی ہے ملک کو اربوں روپے کے مزید قرضوں میں جکڑ کر آئی ایم ایف اور دیگر اداروں کے پاس آزادی گروی رکھ دی ہے تھانہ کلچر اور اداروں میں بیٹھی افسر شاہی سے عوام کی عزت نفس بری طرح مجروح ہورہی ہے کوئی پوچھنے والا نہیں ہر روز عوام پر مہنگائی اور بجلی بلوں کی شکل میں نیا عذاب نازل ہورہا ہے حکومت نام کی کوئی چیز کہیں نظر نہیں آتی عوام پاکستان کو اسلامی جمہوری پاکستان دیکھنا چاہتے ہیں کسی اور نظام بالخصوص مادر پدر آزادی کی بالکل گنجائش نہیں انہوں نے کہاکہ منظم سازش کے تحت مرزاعیت کو فروغ دیا جارہا ہے وہ کل پرزے نکال چکے ہیں جس سے لا الہ الا اللہ کے نام پر معرض وجود میں آنے والے ملک میں ختم نبوت کے نظریہ کو خطرات لاحق ہیں ایسی قوتوں کو نکیل نہ ڈالی گئی تو ملکی حالات ناقابل بیان حد تک خراب ہو سکتے ہیں اہل بیت اور اصحاب رسول کی گستاخی کسی بھی مسلمان کے لیے ناقابل برداشت ہے صبر کی بھی ایک حد ہوتی ہے حکومت یہ سلسلہ ختم کرنے کے لیے جلد قانون سازی کی جائے انہوں نے کہا کہ حکومت نے عوام اور سلیکٹرز کو بری طرح مایوس کیا ہے اس لیے وہ مقررہ مدت ہی پوری کرلے تو غنیمت اگلے ٹنور میں بھی پی ٹی آئی کی حکومت بننے کے دعوں کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں تمام زمینی حقائق حکومت مخالف ہیں اس لیے کسی بھی سطح پر دھاندلی کے زریعے پی ٹی آئی کو دوبارہ اقتدار میں لانے کی غلطی مقتدر قوتیں ہرگز نہیں دہرائیں گیں کیونکہ اس سے ملک کے وجود کو خطرات لاحق ہوسکتے ہیں ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم کی تحریک پیپلز پارٹی کے الگ ہونے سے ناکامی سے دوچار نہیں ہوگی تمام سیاسی جماعتیں مقاصد حاصل کرنے کے لیے متحد ہیں الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں کا استعمال الیکشن کمیشن اور اپوزیشن جماعتوں کے اتفاق سے ہی جڑا ہے حکومت اپنے وزرا کو لگام ڈالے سپریم کورٹ ایک آئیی ادارہ کے خلاف مہم جوئی کا نوٹس لے۔

پریس کانفرنس