میلسی، ڈاکوؤں کی موبائل فون شاپ پر چڑھائی، لوٹ مار

میلسی، ڈاکوؤں کی موبائل فون شاپ پر چڑھائی، لوٹ مار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
 میلسی(تحصیل رپورٹر)3ڈاکوؤں نے موبائل فون شاپ پر دھاوا بول دیا اور گن پوائنٹ پر 4لاکھ 10ہزار روپے(بقیہ نمبر9صفحہ6پر)
 کی نقدی لوٹ کر فرار ہو گئے۔ تفصیل کیمطابق موضع عالمپور کے رہائشی محمد ایوب نے اڈا ہری چند پر موبائل فون شاپ بنا رکھی ہے جہاں وہ گذشتہ شام اپنے دوست کے ہمراہ کے موجود تھا کہ اسی دوران اچانک 3نامعلوم موٹر سائیکل سوار مسلح ڈاکو دکان کے اندر گھس آئے اور گن پوائنٹ پر ان کی تلاشی شروع کر دی دکان کے گلہ سے 3لاکھ 20ہزار جبکہ دونوں کی جیبوں میں موجود 90ہزار روپے کی نقدی نکال لی اور فرار ہو گئے جبکہ دوسرے واقعہ میں چاہ پتن والا موضع ڈھمکی کا رہائشی عبد الحمید اپنے کنواں سے گھر واپس آ رہا تھا کہ راستے میں 3نامعلوم ڈاکوؤں نے اسے اسلحہ کے زور پر روک لیا اور تلاشی لیتے ہوئے جیب میں موجود 26ہزار روپے کی رقم چھین لی اورفرار ہو گئے۔موبائل فون ایسوسی ایشن کا ہنگامی اجلاس زیر صدارت ماجد رشید مونی منعقد ہوا اجلاس میں موبائل مارکیٹ میں ہونے والی ڈکیتی اور چوری کی وارداتوں پر شدید تشویش کا اظہار کیا گیا اس موقع پر جنرل سیکرٹری ملک محمد کاشف، ملک محمد حنیف اور دیگر رہنماؤں نے کہا کہ ہم نے پولیس کو 2چور خود پکڑ کر حوالے کیئے لیکن پولیس نے مبینہ طور پر دونوں ملزمان سے ملی بھگت کرتے ہوئے انہیں تفتیش کیئے بغیر رہا کر دیا پولیس کے اس رویہ کیخلاف ڈی پی او وہاڑی امیر عبد اللہ نیازی کی میلسی آمد کے موقع پر ہم نے تمام تر صورتحال سے انہیں آگاہ کیا لیکن اس کے باوجود صورتحال جوں کی تو ں موجود ہے انہوں نے کہا کہ لاکھوں روپے کے موبائل فون چھین لیئے گئے اور دکانوں میں نقب لگا کر ہمارے 2ڈیلروں کو کوڑی کوڑی کا محتاج بنا دیا گیا لیکن پولیس ٹس سے مس نہیں ہو رہی انہوں نے پولیس حکام کو الٹی میٹم دیتے ہوئے کہا کہ 2روز کے اندر ملزموں کو گرفتار کر کے برآمدگی یقینی نہ بنائی گئی توتاجر تنظیموں کے ساتھ مل کر ڈی ایس پی آفس کے باہر احتجاجی کیمپ لگایا جائیگا اور شہر بھر کی تاجر برادری بھر پور احتجاج کریگی اجلاس میں ملک محمد سلیم، اسد اللہ نیازی، شعیب نذیر چوغطہ، محمد طاہر، حافظ محمد شعیب، فیصل خان غوری، مدثر رشید سمیت کثیر تعداد میں تاجروں نے شرکت کی بعد ازاں انہوں نے پولیس کیخلاف احتجاجی مظاہرہ بھی کیا۔
لوٹ مار