کیا پینگوئن خلائی مخلوق ہے؟ فضلے میں ایسا کیمیکل مل گیا کہ محققین نے سر جوڑ لیے

کیا پینگوئن خلائی مخلوق ہے؟ فضلے میں ایسا کیمیکل مل گیا کہ محققین نے سر جوڑ ...
کیا پینگوئن خلائی مخلوق ہے؟ فضلے میں ایسا کیمیکل مل گیا کہ محققین نے سر جوڑ لیے
سورس: Pixabay

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) پینگوئن ایک معروف پرندہ ہے جس کے فضلے میں اب ماہرین نے ایک ایسا کیمیکل دریافت کر لیا ہے کہ اس پرندے کے خلائی مخلوق ہونے کا شبہ ظاہر کر دیا ہے۔ڈیلی سٹار کے مطابق ماہرین نے اپنی ایک تحقیق کے نتائج میں بتایا ہے کہ پینگوئن کے فضلے میں ایک ایسا کیمیکل بھی پایا جاتا ہے جو دراصل زہرہ نامی سیارے پر پایا جاتا ہے۔ اس سے شبہ ہوتا ہے کہ پینگوئن ممکنہ طور پر زمین کا پرندہ نہیں ہے بلکہ خلائی پرندہ ہے جو ستارے زہرہ سے کسی طرح زمین پر آیا۔
رپورٹ کے مطابق پینگوئن کے فضلے میں پایا جانے والا یہ کیمیکل فاسفین ہے جس کے متعلق ماہرین حیران ہے کہ یہ زمین پر کیسے آیا کیونکہ کیمیکل ہماری زمین سے 3کروڑ 80لاکھ میل کے فاصلے پر واقع ستارے زہرہ پر پایا جاتا ہے۔ زہرہ پر یہ کیمیکل ایک گیس کی صورت میں موجود ہے جس کی تیز بو ہوتی ہے۔امپیرئیل کالج لندن کے ڈاکٹر ڈیو کلیمنٹس کا کہنا ہے کہ ”پینگوئن کے فضلے میں فاسفین کی موجودگی ایک حقیقت ہے تاہم تاحال ہم یہ نہیں سمجھ پائے کہ پینگوئن کے اندر یہ کیمیکل پیدا کیسے ہوتا ہے۔ 

مزید :

ڈیلی بائیٹس -