بھارتی وزیراعظم بے اختیار،ڈوریں سونیاگاندھی کے پاس تھیں،قریبی ساتھی کا انکشاف

بھارتی وزیراعظم بے اختیار،ڈوریں سونیاگاندھی کے پاس تھیں،قریبی ساتھی کا ...

  

 نئی دہلی(این این آئی)بھارتی وزیر اعظم منموہن سنگھ کے ایک قریبی ساتھی سنجایا بار±و نے انکشاف کیاہے کہ من ہوہن سنگھ ایک بے اختیاروزیراعظم ہیں ان کی ڈوریں حکمراں جماعت کانگریس کی سربراہ سونیاگاندھی کے پاس ہیں، ملک بھر میں جاری سخت انتخابی معرکے میں اس کتاب نے ایک نیا تنازعہ کھڑا کر دیا ہے،ادھر منموہن سنگھ کے ترجمان پنکھج پچوری نے کہا کہ یہ کتاب محض من گھڑت باتوںپر مبنی ہے، گزشتہ روز”دی ایکسیڈنٹل پرائم منسٹر، دی میکنگ اینڈ اَن میکنگ آف منموہن سنگھ “نامی اپنی کتاب میں سنجایا بار±و نے کہاکہ منموہن سنگھ وزراتِ عظمیٰ پر تو ضرور فائز تھے مگر صحیح معنوں میں برسرِ اقتدار نہیںتھے اور یہ کہ پیچھے سے ہر طرح کے فیصلوں کی ڈور کانگریس پارٹی کی صدر سونیا گاندھی کے ہی ہاتھوں میں رہی، انہوں نے کتاب میں لکھا کہ وزیراعظم من موہن کو بالاآخریہ تسلیم کرنا پڑا تھا کہ طاقت کا مرکز و محور پارٹی صدر (گاندھی) ہیں،انہوں نے لکھا کہ سنگھ نے کرپشن اور بدعنوانی سے نظریں بند کیے رکھیں تاکہ اسکینڈلز کی زَد میں آئی ہوئی اپنی حکومت کو طول دے سکیں،من موہن نے عوام کے سامنے تو راست بازی اور ایمانداری کے اعلیٰ ترین معیارات کا دم بھراتاہم ا±نہوں نے اپنے و±زراءکے سیاہ کارناموں کی جانب سے آنکھیں بند کیے رکھیں۔ بار±و کے مطابق سنگھ نے سوچا تھا کہ وہ اپنے و±زراءکا انتخاب خود کریں گے لیکن سونیا نے ا±ن کی اِس امید پر شروع ہی میں پانی پھیر دیا،ادھر منموہن سنگھ کے ترجمان پنکھج پچوری نے کہا کہ یہ کتاب محض من گھڑت باتوںپر مبنی ہے، ا±نہوں نے بار±و پر الزام لگایا کہ ا±نہوں نے اپنی امتیازی پوزیشن اور حیثیت کا غلط استعمال کرتے ہوئے ا±س سے کاروباری فائدہ اٹھایا ہے۔

مزید :

عالمی منظر -