د یا کاکوئی آئی اورقا و ت قیدسے ہیں روکتا ، اصراقبال خا 13( پ ر )

د یا کاکوئی آئی اورقا و ت قیدسے ہیں روکتا ، اصراقبال خا 13( پ ر )

  

  ( پ ر ) ہیوم رائٹس مووم ٹ کے مرکزی صدرمحمد اصراقبال خا ، س رل محمدرضاایڈووکیٹ ،مرکزی سی ئر ائب صدر محمدفاروق چوہا ، صدرمدی ہ م ورہ سرفرازخا یازی،صدرکراچی یو س میم ،صدرپ جاب محمدیو س ملک، ائب صدورپ جاب عزت رسول ایڈووکیٹ،احدح یف،شیخ طلال امجد اورصدرفیصل آباد دیم مصطفی ے کہا ہے کہ ت قیداورتوہی میں زمی آسما کافرق ہے۔د یا کا کوئی آئی اورقا و ت قیدکر ے سے ہیں روکتا،تاہم کسی کو ت قید کی آڑمیں توہی کر ے کاحق ہیں پہ چتا۔جہاں ت قیداوراختلاف رائے کاحق سلب کرلیا جائے وہاں بگاڑپیداہوتا ہے۔تعمیر،تدبراورتدبیر کاراستہ ت قیدسے ہوکرجاتا ہے۔خاموش صرف قبرستا ہوتے ہیں جبکہ ہرز دہ معاشرہ سوچتااور بولتا ہے ۔ہمارے ہاں جمہوریت ہویاآمریت دو وں صورتوں میں تعمیری ت قید کااحترام ہیں کیا جاتا ۔ ت قید درحقیقت اختلاف رائے کے اظہار کامہذب ذریعہ ہے ۔بحیثیت باوردی صدرپرویز مشرف کے ماورائے آئی اقدامات پرت قید جائز اورشہریوں کاآئی ی وا سا ی حق ہے تاہم اس آڑ میں کسی بھی فردیاادارے کوتوہی کا شا ہ ب ا ے کی اجازت ہیں دی جاسکتی۔وہ ایک اجلاس سے خطاب کررہے تھے۔محمد اصراقبال خا ے کہا کہ پاکستا میں آج بھی آئی اورقا و کی حکمرا ی محض ایک خواب ہے جوخداجا ے کب شرم دہ تعبیر ہوگا۔جمہوریت ہویاآمریت عام آدمی کی حالت زار ہیں بدلی ،چہروں کابدل اکوئی مع ی ہیں رکھتا۔ا ہوں ے کہا کہ جہاں ا سا پی ے کے صاف پا ی ،صحت کی جدیدسہولیات اورتعلیم سمیت ب یادی ضروریات سے محروم ہوں وہاں شاہراہوں پرپیسہ برباد ہیں کیا جاتا ۔جعلی سروے چھپوا ے سے حقیقت ہیں بدلے گی ،پاکستا کومقبول ہیں معقول حکمرا وں کی ضرورت ہے جوجعلی شہرت کیلئے شعبدہ بازی ہ کرتے ہوں۔ ا ہوں ے کہا کہ صرف آئی شک ی ہیں بلکہ عہدشک ی پربھی سزامل ی چاہئے ،پرویزمشرف کوسزاملے یا ہ ملے مگر پاکستا کے عام لوگ پچھلی کئی دہائیوں سے جرم بیگ اہی کی سزابھگت رہے ہیں۔جوچھوٹی جیل میں ہیں ا ہیں تی وقت خوراک مل جاتی ہے مگرجو بیچارے بڑی جیل میں ہیں ا ہیں پیٹ کی آگ بجھا ے کیلئے کبھی اپ ا خو توکبھی گردہ بیچ اپڑتا ہے۔

مزید :

کالم -