قرض خواہ کے تقاضے اور رقم کا بندوبست نہ ہونے پر محنت کش نے گھر یلوں سامان کو آگ لگا دی

قرض خواہ کے تقاضے اور رقم کا بندوبست نہ ہونے پر محنت کش نے گھر یلوں سامان کو ...

  

                         لاہور(کرائم سیل)شمالی چھاﺅنی کے علاقہ میں قرض کی رقم کا بندوبست نہ ہونے پر قرض خوا ہ کے ساتھ تکرار ہونے پرایک شخص نے طیش میں آکر گھریلو سامان گھر کے باہر رکھ کر آگ لگادی۔ بتایا گیا ہے کہ صدر بازار کا رہائشی محنت کش شفیق آج کل بے روزگار تھا ، اس نے اپنے ایک دوست اکرم سے دو ہزار روپے قرض لے رکھا تھا۔ شفیق نے رقم کی واپسی کا گزشتہ روز کا وعدہ کررکھا تھا۔ اکرم قرض کی رقم واپس لینے کے لئے آےا توشفیق نے رقم کی واپسی کے لئے مزید مہلت مانگی جس پر اکرم نے انکار کردیا اورفوری طور پر رقم کا مطالبہ کیا ۔اس دوران دونوں دوستوں کے درمیان تو تکار ہوگئی اور اکرم نے کہا کہ گھر کی چیزیں فروخت کرکے میری رقم واپس کردو اور گھر سے قیمتی چیزیں اٹھانے لگا ۔اس پر شفیق طیش میں آگیا اور گھر کے قیمتی سامان کو گھر کے باہر رکھ کر آگ لگادی ، آگ نے بجلی کی تاروں کو چھولیااورشعلے بھڑک اٹھے جبکہ قیمتی گھریلو سامان جل کر راکھ ہوگیا۔ محلے داروں نے مداخلت کرکے کافی تعداد میں قیمتی گھریلو سامان کو آگ کی لپیٹ میں آنے سے بچالیا۔ واقعہ کی اطلاع پر ریسکیو 1122 کی ٹیم موقع پر پہنچ گئی اور آگ پر قابو پالیا ۔پولیس نے واقعہ کی انکوائری شروع کردی ہے اور گھر کے مالک شفیق اور اکرم کی تلاش میں چھاپے مارنا شروع کردیئے ہیں۔ شفیق کے بڑے بھائی رشید احمد،افضل خان سمیت محلے داروں اصغر علی، حاجی خوشی محمد، شان نواز اور دیگر نے بتایا کہ شفیق محنت مزدوری کرتا ہے،اس نے قرض کی رقم کا بندوبست نہ ہونے اوراکرم کے تقاضے پر طیش میں آکر گھر کے قیمتی سامان کو آگ لگائی ہے ۔

مزید :

علاقائی -