سی بی اے کااحتجاج درست نہیں انتظامیہ ایس این جی پی ایل

سی بی اے کااحتجاج درست نہیں انتظامیہ ایس این جی پی ایل

لاہور (پ ر) سوئی ناردرن انتظامیہ گذشتہ روز سی بی اے کی جانب سے چند ریجنل دفاترمیں کئے جانے والے احتجاج کو غیر منصفانہ ، غیر ضر وری اور غیر قانونی قرار دیتے ہوئے وضاحت کرتی ہے کہ موجودہ سی بی اے کا اجتجاج ملا زمین کے ایگریمنٹ ، بلڈ ریلیشن کوٹہ ( بی آر کیو) ا نٹر ویوز میں عدم مداخلت اور کرپشن میں ملوث ملا زمین کے خلا ف انظباتی کاروائیو ں کا رد عمل ہے۔انتظامیہ مزید واضح کرتی ہے کہ ایگریمنٹ میں تاخیر کی بنیادی وجہ بھی خود سی بی اے ہی ہے۔ مینجمنٹ نے اوگرا کی طرف سے دے گئے سارے فنڈز کو ایگریمنٹ کے لیے وقف کر دیا ہے جبکہ سی بی اے کو یہ بھی نا منظور ہے۔ مینجمنٹ کے پاس استعداد نہیں کہ وہ فنڈز کو مزید بڑھا سکیں کیونکہ اوگرا ایس این جی پی ایل کے ملازمین کو دی جانے والی تنخواہوں اور اجرتوں کا تعین خود کرتا ہے۔ سی بی اے انٹرویو کمیٹی کے ممبران پر اثر انداز ہو کر اپنے حمایت یافتہ امیدواروں کو کامیاب کروانا چاہتی ہے۔  یہ مینجمنٹ کا بنیادی شعار ہے کہ یہ انٹرویو بالکل شفاف انداز میں ہوں اورامیدوار میرٹ پر منتخب کیے جا سکیں۔اسی طر ح ملازمین کے خلاف محکمانہ انکوائریاں بالکل شفاف طریقے سے عین قانون کے مطابق عمل میں لائی جاتیں ہیں۔ جس کے تحت بد دیانت ملازمین کو چارج شیٹ کیا جاتا ہے، تنزلی عمل میں لائی جاتی ہے یا ان کو برخاست کر دیا جاتا ہے۔ سی بی اے ان سب انکوایریوں کی واپسی چاہتی ہے جسے اگر مان لیا جائے تو یہ کمپنی میں بددیانتی کو فروغ دینے کا موجب بنے گا۔ انڈسٹریل ریلیشنز ایکٹ 2012 سختی سے ملازمین کو اس عمل سے روکتا ہے اور اس کو"Unfair labour parctices on part of workmen" کے زمرے میں شمار کرتا ہے۔اس تناظر میں سی بی اے کا احتجاج غیر منصفانہ ، غیرضروری اور غیر قانونی ہے۔

مزید : کامرس


loading...