مائی کراچی نمائش مصنوعات کی زبر دست تشہیر کیساتھ ختم،شرکا کا سال میں 2 بار کرانے کا مطالبہ

مائی کراچی نمائش مصنوعات کی زبر دست تشہیر کیساتھ ختم،شرکا کا سال میں 2 بار ...

 کراچی(این این آئی)کراچی چیمبرآف کامرس اینڈانڈسٹری(کے سی سی آئی) کے زیر اہتمام ایکسپو سینٹر میں جاری 3روزہ 12ویں’’مائی کراچی نمائش‘‘ اختتام پزیر ہوگئی ہے۔بزنس مین گروپ کے چیئرمین اور کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سابق صدر سراج قاسم تیلی نے کے سی سی آئی کے زیر اہتمام ایکسپو سینٹر میں3روز سے جاری 12ویں سالانہ مائی کراچی نمائش میں زندگی کے مختلف طبقوں سے تعلق رکھنے والے لاکھوں افراد کی شرکت کا خیر مقدم کیا اور اگلے سال بھی شایان شان طریقے سے 8تا 10اپریل2016کو ایکسپو سینٹر میں مائی کراچی نمائش کے انعقاد کااعلان کیاہے ۔گزشتہ روزایکسپو سینٹر میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ہر سال مائی کراچی نمائش گزشتہ نمائشوں کی نسبت زیادہ بہتر انداز میں منعقد کی جاتی ہے اور یہ کامیابی کے سی سی آئی کے عہدیداران، خصوصی کمیٹی برائے مائی کراچی نمائش اور منیجنگ کمیٹی کے ارکان سمیت تمام بی ایم جی کے تعاون اور انتھک محنت کی بدولت ہی ممکن ہوئی ہے جنہوں نے اس نمائش کو یادگار بنانے میں اہم کردار ادا کیا۔سراج قاسم تیلی نے کہاکہ12ویں سالانہ مائی کراچی نمائش ایک بہترین پلیٹ فارم ثابت ہوئی جہاں ملکی و غیر ملکی تاجروں نے اپنی مصنوعات اور خدمات کی تشہیر کی،ایکسپو سینٹر کے تمام 6ہالز میں300اسٹالز لگائے گئے جبکہ تقریباً7لاکھ افراد نے نمائش کا دورہ کیا۔اس موقع پر انڈونیشیا کے قونصل جنرل ہادی سانتوسو،سوئٹزر لینڈ کے قونصل جنرل روجر کل ، بزنس مین گرپ کے وائس چیئرمین زبیر موتی والا،انجم نثار،کے سی سی آئی کے صدر افتخار احمد وہرہ، سینئر نائب صدر محمد ابراہیم کوسمبی، خصوصی کمیٹی برائے مائی کراچی نمائش کے چیئرمین محمد ادریس میمن، خصوصی کمیٹی کے ڈپٹی چیئرمین شمیم احمد فرپو،سابق صدر کے سی سی آئی اے کیو خلیل اور منیجنگ کمیٹی کے اراکین بھی ان کے ہمراہ تھے ۔چیئرمین بی ایم جی نے کراچی میں کے سی سی آئی کی نمائش میں تعاون پرمختلف قونصلیٹ کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہاکہ12ویں مائی کراچی نمائش میں 19ممالک نے شرکت کی اور اگلے سال مزید غیر ملکی نمائش کنندگان کی شرکت متوقع ہے  ،نمائش کوملکی و غیر ملکی سطح پرایک اہم ایونٹ تسلیم کیاجانے لگا ہے ۔سراج قاسم تیلی نے امن وامان کی مجموعی صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے کہاکہ ماضی کے مقابلے میں امن وامان کی صورتحال قدرے بہتر ہوئی ہے لیکن قومی خزانے میں68فیصد سے زائد ریونیو دینے والے شہر کراچی میں امن وامان کی صورتحال کو مزید بہتر بنانے کی ضرورت ہے ۔انہوں نے کے سی سی آئی کی خصوصی کمیٹی برائے مائی کراچینمائش کے چیئرمین محمد ادریس کی خدمات کوسراہتے ہوئے کہاکہ5ماہ کی انتھک جدوجہد کے نتیجے میں نمائش میں عالمی معیار کے لان فیبرک پویلین کاقیام اور فیشن شو کا انعقاد خوشگوار اضافہ تھا جو نہ صرف شاندار طریقے سے منعقد کیا گیا بلکہ ہر ایک نے اس کی تعریف کی لہذا یہ کہا جاسکتا ہے کہ محمد ادریس او ر ان کی ٹیم آئند ہ بھی اس نمائش کو مزید کامیاب بنانے میں اپنا کردار اداکرے گی۔انہوں نے خاص طور پر صوبائی حکومت ، ٹریڈ ڈیولپمنٹ اتھارٹی،سندھ پولیس،رینجرز اور انٹیلی جنس ایجنسیوں کے تعاون کابھی شکریہ ادا کیا جن کے تعاون سے نمائش کے دوران کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔کے سی سی آئی کے صدر افتخار احمد وہرہ نے کہاکہ شرکا نے نمائش کے انتظامات پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے خواہش ظاہر کی ہے کہ یہ نمائش سال میں 2 بار منعقد کی جائے تاکہ کراچی والوں کو اس سے زیادہ سے زیادہ فوائد حاصل ہوسکیں۔کے سی سی آئی کی خصوصی کمیٹی برائے مائی کراچینمائش محمد ادریس نے بی ایم جی لیڈرشپ خصوصاسراج قاسم تیلی و دیگر بی ایم جی کوخراج تحسین پیش کیاجن کے تعاون کی بدولت یہ نمائش سابقہ ریکارڈز توڑتے ہوئے شہر کراچی کے لوگوں کے لیے ایک یادگار ایونٹ بن گیاہے ۔

مزید : کامرس


loading...