پیرا میڈیکل الائنس کی مطالبات کے حق میں احتجاجی ریلی

پیرا میڈیکل الائنس کی مطالبات کے حق میں احتجاجی ریلی

لاہور( جنرل رپورٹر) پیرا میڈیکل الائس ( ملک منیر گروپ) کی مطالبات کے حق میں احتجاجی ریلی۔ ریلی گنگا رام ہسپتال سے لے کر اسمبلی چوکی تک نکالی گئی اور دھرنا بھی دیا گیا۔پیرا میڈیکل الائنس کے احتجاج کی وجہ سے مریضوں کو سخت دشواری کا سامنا کرنا پڑا، آپریشن بھی ملتوی ہو گئے، دور دراز سے آئے مریض ڈاکٹروں اور ہسپتال انتظامیہ کو کوستے رہے۔ گنگا رام، جنرل ہسپتال، سروس ہسپتال اور میو ہسپتال کے آؤٹ ڈور زمیں بھی مریضوں کو سخت دشواری کا سامنا کرنا پڑا، آؤٹ ڈور بند تو نہ ہوئے تاہم مریضوں کو چیک اپ کروانے میں شدید دشواری کا سامنا رہا ۔ ریلی میں سرکاری ہسپتالوں سے پیرا میڈیکل کے عہدیداروں اور ملازمین نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ جلسہ کے احتجاجی شرکا ء سے خطاب کرتے ہوئے پیرا میڈیکل الائنس کے صوبائی چیئرمین ملک منیر، حافظ دلاور، شعیب انور اور نے کہا کہ پنجاب حکومت بار بار وعدوں اور یقین دہانیوں کے باوجود مطالبات پر عملدرآمد نہیں کروا رہی ہے، جس سے ملازمین میں مایوسی پھیل کر رہ گئی ہے۔ اب حکومت کے کسی بھی ترجمان سے مذاکرات نہیں ہوسکتے۔ جب تک مطالبات مکمل طور پر پورے نہیں ہوتے احتجاج اور دھرنوں کا سلسلہ جاری رہے گا۔صدر عمر زمان قریشی ، سلطان محمود اور خالد چودھری نے کہا کہ حکومت کنٹریکٹ ملازمین اور بورڈ آف مینجمنٹ کے تحت بھرتی کئے گئے ملازمین کو مستقل کرنے کے وعدوں کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کا مطالبہ کیا گیا۔ جلسہ کے شرکاء نے خطاب کرتے ہوئے عاشق غوث، خالد چودھری ، عمر زمان قریشی اور قاری ارشاد و دیگرنے کہا کہ حکومت اور محکمہ صحت کے افسران کے خلاف سخت نعرے بازی کرتے ہوئے کہا کہ حکومتی نمائندے ہر دفعہ مذاکرات کرنے تو آ جاتے ہیں مگر انہیں یہ محسوس کیوں نہیں ہوتا کہ ملازمین جن کی نوکریاں داؤں پر لگی ہوئی ہیں ان کے مطالبات حل کر کے مایوسیاں دور کی جائیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...