توقع کرتے ہیں کہ پاکستان انصاف کا ساتھ دے گا ،سعودی وزیر

توقع کرتے ہیں کہ پاکستان انصاف کا ساتھ دے گا ،سعودی وزیر

اسلام آباد (خصوصی رپورٹ) سعودی وزیر صالح بن عبدالعزیز نے کہا ہے کہ پاکستان سے یمن میں باغیوں کیخلاف قائم اتحاد میں شامل ہونے کی درخواست کی گئی ہے۔پاکستان کے اہم دورے پر آئے سعودی وزیر صالح بن عبدالعزیز نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کی مشترکہ قرارداد پاکستان کا اندرونی معاملہ ہے۔ سعودی عرب اس میں مداخلت نہیں کرے گا تاہم توقع کرتے ہیں کہ پاکستان انصاف کا ساتھ دے گا۔ سعودی وزیر نے کہا کہ پاکستان سے یمن میں باغیوں کیخلاف قائم اتحاد میں شامل ہونے کی درخواست کی گئی ہے۔ اتحاد میں شمولیت کا مطلب سیاسی اور ہر طرح کی حمایت ہے۔ سعودی عرب کی سلامتی کے لئے پاکستان پوری قوت لگائے گا۔ اس سے قبل وفاقی وزیر مذہبی امور سردار یوسف سے ان کے سعودی ہم منصب نے ملاقات کی جس میں دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیالات کیا گیا۔ ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سعودی وزیر نے کہا کہ وہ پاکستانی پارلیمنٹ کی قرارداد کا احترام کرتے ہیں۔ سعودی عرب اور پاکستان کے درمیان دیرینہ دوستانہ تعلقات ہیں اور انہیں یقین ہے کہ پاکستان ہمیشہ سعودی عرب کے ساتھ رہے گا۔ اس موقع پر وفاقی وزیر سردار یوسف نے کہا کہ حرمین شریفین جا کر دلی سکون ملتا ہے۔ پاکستان ہر مشکل گھڑی میں سعودی عرب کے شانہ بشانہ ہوگا۔ اس سے قبل سعودی وزیر نے جمعیت اہلحدیث کے سربراہ ڈاکٹر ساجد میر اور جے یو آئی (ف) کے امیر مولانا فضل الرحمن سے بھی ملاقاتیں کیں جن میں پاک سعودی تعلقات سمیت یمن کی صورتحال پر تبادلہ خیالات کیا گیا۔

مزید : صفحہ اول


loading...