بنگلہ دیش میں احتجاج کے دوران گولیاں چلنے سے دوطلباءجاں بحق

بنگلہ دیش میں احتجاج کے دوران گولیاں چلنے سے دوطلباءجاں بحق
بنگلہ دیش میں احتجاج کے دوران گولیاں چلنے سے دوطلباءجاں بحق

  


ڈھاکہ (مانیٹرنگ ڈیسک) بنگلہ دیش میں جماعت اسلامی کے اعلیٰ رہنما کی پھانسی کے خلاف احتجاج کے دوران دوطلباءگولی لگنے سے ہلاک ہوگئے۔

پیر کو ذرائع ابلاغ کے مطابق جماعت اسلامی بنگلہ دیش کے رہنما محمد قمر الزمان کی پھانسی کے بعد ملک بھر میں کشیدگی پھیل گئی ہے۔ پولیس نے بتایا کہ پیر کے روز راج شاہی نامی علاقہ سے جماعت اسلامی کے حامی سرگرم کارکن اور 22 سالہ طالب علم کی لاش ملی ہے جس کے جسم پر پانچ گولیاں لگی ہیں۔

شمالی مغربی ضلع سراج گنج میں پولیس اور مظاہرین کے مابین جھڑپوں کے دوران ایک اور طالب علم فائرنگ سے زخمی ہوا ہے جو کہ بعد ازاں ہسپتال میں زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ گیا۔ضلع سراج گنج کے ڈپٹی پولیس چیف فاروق احمد نے بتایا کہ پولیس کی طرف سے جماعت اسلامی کے حامی چار مظاہرین کو گرفتار کر لئے جانے کے بعد طلباءاور پولیس میں جھڑپیں شروع ہوئی تھیں۔

مزید : بین الاقوامی


loading...