پاکستان کشمیریوں کی سفارتی ،اخلاقی اور سیاسی حمایت جاری رکھے گا :سرتاج عزیز

پاکستان کشمیریوں کی سفارتی ،اخلاقی اور سیاسی حمایت جاری رکھے گا :سرتاج عزیز

استنبول (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعظم کے مشیر برائے امور خارجہ سرتاج عزیز نے واضح پیغام دیا ہے کہ پاکستان کشمیریوں کی سفارتی، اخلاقی اور سیاسی حمایت جاری رکھے گا،سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جائے، مقبوضہ کشمیر کا تنازع خطے کے امن و سلامتی کیلئے خطرہ ہے، خطے میں پائیدار امن کیلئے مسئلہ کشمیرمذاکرات کے ذریعے حل کیا جائے۔ ترکی کے دارالحکومت استنبول میں اسلامی تعاون تنظیم کے جموں و کشمیر سے متعلق رابطہ گروپ کے اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔ اجلاس میں مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے پاکستان کی نمائندگی کرتے ہوئے سلامتی کونسل کی قرار دادوں کے مطابق کشمیریوں کی خود ارادیت کی حمایت جاری رکھنے کے عزم کا اعادہ کیا۔ اجلاس میں سرتاج عزیز نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں سے شرکاء کو آگاہ کیا۔ مشیر خارجہ نے اجلاس سے خطاب میں کہا کہ پاکستان کشمیریوں کی سفارتی، اخلاقی اور سیاسی حمایت جاری رکھے گا، اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق کشمیریوں کو حق خودارادیت دیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ او آئی سی تنظیم اور رابطہ گروپ کی کشمیریوں کی جدوجہد کی حمایت قابل تعریف ہے، مقبوضہ کشمیر کا تنازع خطے کے امن و سلامتی کیلئے خطرہ ہے، مسئلہ کشمیر سلامتی کونسل کی قرار دادوں اور کشمیری عوام کی خواہشات کے مطابق حل کیا جائے، تنظیم مسئلہ کشمیر اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا معاملہ عالمی سطح پر اجاگر کرے، خطے میں پائیدار امن کیلئے مسئلہ کشمیر مذاکرات کے ذریعے حل کیا جائے۔ اجلاس میں کشمیری رہنماء غلام محمد نے یادداشت بھی پیش کی، جس کے متن میں کہا گیا کہ بھارت نے کشمیری رہنماؤں کے بیرون ملک پر پابندی عائد کر رکھی ہے۔ اجلاس سے تنظیم کے سیکرٹری جنرل کے خصوصی نمائندے عبداللہ العالم نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رابطہ گروپ کشمیریوں کے حق خودارادیت کے اصولی موقف کی حمایت کرتا ہے،عالمی سطح پر مقبوضہ کشمیریوں کے حقوق کی پامالی کے خلاف آواز اٹھاتے رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کی جدوجہد کو دہشت گردی سے جوڑنے کی بھارتی کوششیں قابل افسوس ہیں، کشمیری اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق اپنے حق کے حصول کی جدوجہد کر رہے ہیں، مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پائمالیوں کا جائزہ لینے کیلئے وضع کئے گئے میکنزم کا خیرمقدم کرتے ہیں، انسانی حقوق کی صورتحال کی رپورٹ تنظیم کی وزارتی کونسل کے آئندہ اجلاس میں پیش کی جائے گی، آئی پی ایچ آر سی کشمیر سول سوسائٹی سے قریبی رابطے میں رہے گی۔

مزید : علاقائی