رمضان البارک میں سستے آٹے کی فراہمی کیلئے محکمہ خوراک نے 5ارب روپے مانگ لئے

رمضان البارک میں سستے آٹے کی فراہمی کیلئے محکمہ خوراک نے 5ارب روپے مانگ لئے

لاہور(سعید چودھری )محکمہ خوراک نے وزیراعلیٰ پنجاب کو رمضان المبارک میں سستے آٹے کی فراہمی کے لئے 5ارب روپے کی سبسڈی دینے کی سفارش کردی ،اس سلسلے میں سیکرٹری خوراک کی سربراہی میں ہونے والے اجلاس میں ڈائریکٹر جنرل فوڈ کی طرف سے پیش کی گئی تین تجاویز کی منظوری دے کر سمری توثیق کے لئے وزیراعلیٰ کوبھجوا دی گئی ہے ۔محکمہ فوڈ نے سبسڈی کی مد میں کم و بیش 5ارب روپے مختص کرنے کی تجویز دی ہے ،سستے آٹے کی فروخت سے متعلق پہلی تجویز کے مطابق سستے رمضان بازاروں میں 20کلو کا تھیلا 620روپے اور عام بازار میں 660روپے ،دوسری تجویز کے مطابق سستے رمضان بازاروں میں20کلو آٹے کا تھیلا 600روپے اورعام بازار میں640روپے جبکہ تیسری تجویز کے مطابق رمضان بازار میں 20کلو گرام آٹے کی قیمت 580روپے اور عام بازار میں 620روپے مقرر کرنے کی سفارش کی گئی ہے ۔سمری میں ہر مجوزہ قیمت کے لئے سبسڈی کے لئے مختلف رقوم کا تخمینہ لگایا گیا ہے ۔دوسری طرف سیکیورٹی اداروں سے رمضان بازاروں کے حوالے سے کلیئرنس لینے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ذرائع کے مطابق ابتدائی رپورٹس میں رمضان بازاروں میں سکیورٹی خدشات کا اظہار کیا گیا ہے ،اس لئے سستے رمضان بازار لگانے کا فیصلہ سیکیورٹی کلیئرنس کے بعد کیا جائے گا،ایسی صورت میں عام بازار میں فروخت ہونے والے آٹے پر سبسڈی دینے کی تجویز ہے جس سے تمام شہری یکساں طور پر مستفید ہوسکیں گے جس سے سستے رمضان بازاروں میں فروخت کے لئے پیش کی جانے والے آٹے کی خصوصی پیکنگ اور دیگر اخراجات کی بھی بچت ہوسکتی ہے ۔

سستاآٹا

مزید : صفحہ آخر