مکہ، مدینہ میں ایڈوانس ادائیگیاں، پرائیویٹ سکیم کا کوٹہ کم ہونے سے حج آرگنائزر کے کروڑوں ڈوبنے کا خدشہ

مکہ، مدینہ میں ایڈوانس ادائیگیاں، پرائیویٹ سکیم کا کوٹہ کم ہونے سے حج ...

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)وزارت مذہبی امور نے ہوپ سے ہاتھ کر دیا، وفاقی وزیر مذہبی امور سردار محمد یوسف ،سعودی موسسہ جنوب ایشیاء،قائمہ کمیٹی قومی اسمبلی اور ہوپ کی سفارشات برائے حج2016ء کیلئے سرکاری اور پرائیویٹ حج سکیم کا کوٹہ آدھا آدھا رکھنے کے برعکس حج پالیسی2016ء میں سرکاری سکیم کا کوٹہ60فیصد اور پرائیویٹ سکیم کا کوٹہ 40فیصد منظور کروانے پر بہت خوش ہیں،معلوم ہوا ہے 60اور40کا تناسب میں تاثر دیا جا رہا ہے کہ حج2016ء میں پرائیویٹ سکیم کا کوٹہ صرف 10فیصد کم ہو گاحالانکہ حقائق کچھ اور بتا رہے ہیں عملی طور پر 20فیصد کم کرنے کا منصوبہ بنایا گیا ہے معلوم ہوا ہے پاکستان سے جانے والے کل عازمین حج ایک لاکھ 43ہزار میں سے 60اور 40کے فارمولا کے تحت 86ہزار سرکاری سکیم جبکہ 57ہزار پرائیویٹ سکیم کا ہونا چاہیے تھا مگر معلوم ہوا ہے پرائیویٹ سکیم کو 52ہزار دینے کاپروگرام تشکیل دیا گیا ہے 2013ء سے پرائیویٹ سکیم کا حج کوٹہ پہلے ہی20فیصد کم چلا آ رہا ہے اس سال مزید 20فیصد کم ہونے پر 40فیصد کوٹہ کم ہو جائے گا ،سالہا سال سے کام کرنے والے حج آرگنائزر جو مکہ مدینہ میں اپنے ہوٹل اپنے کوٹہ کے مطابق پہلے بُک کروا لیتے ہیں معلم کو ادائیگیاں کر دیتے ہیں ان کو کروڑوں روپے کے نقصان کا خطرہ بڑھ گیا ہے ،وزارت مذہبی امور اور ہوپ کے درمیان طویل مذاکرات اور دونوں اطراف سے ایک دوسرے کو قائل کرنے کی کوششوں کا کوئی نتیجہ سامنے نہیں آیا ہے وفاقی وزیرففٹی ففٹی کا وعدہ کرتے رہے مگر عملی طور پر 60اور40کروانے میں کامیاب رہے ہیں ،ہوپ اور وزارت کے درمیان ڈیڈ لاک کی وجہ سے حج پالیسی منظور ہونے کے باوجودمزید تاخیر کا شکار ہو سکتی ہے کیونکہ وزارت مذہبی امور نے وزیر اعظم سے حج پالیسی کی منظوری حاصل کرنے کے بعد سندھ ہائیکورٹ کو جلد سماعت کی درخواست دی ہے ،سندھ ہائیکورٹ میں 19اپریل کو سماعت معمول کے مطابق ہونا ہے وہاں سے اگر فیصلہ وزارت کے حق میں آتا ہے تو ہوپ سپریم کورٹ میں جائے گی اور اگر ہوپ کے حق میں آتا ہے تو وزارت سپریم کور ٹ جائے گی ،وزارت کے ذرائع نے بتایا ہے حج پالیسی کی منظوری کو بنیاد بنا کرسپریم کورٹ جا سکتے ہیں۔

مزید : صفحہ آخر