باجو ڑ ایجنسی میں ایک عشرہ سے موبائل ٹاورز بند

باجو ڑ ایجنسی میں ایک عشرہ سے موبائل ٹاورز بند

باجو ڑ ایجنسی ( نمائندہ پاکستان )باجوڑ ایجنسی کے پریس کلب خار میں جماعت اسلامی کے طرف سے ایجنسی میں موبائل ٹاور ز کو بند کرنے کے خلاف پریس کانفرنس کی گئی جس میں جماعت اسلامی کے قائدین کے علاوہ دوسرے سیاسی و سماجی شخصیات نے شرکت کی پریس کانفرنس میں خطاب کرتے ہوئے جماعت اسلامی باجوڑ کے امیر قاری عبد المجید نے کہا کہ ایجنسی میں گزشتہ 10مارچ سے موبائل ٹاور کے سگنل کو بند کر دیا گیا ہے جس سے عوام کو انتہائی تکلیف سے گزرنا پڑ رہا ہے بیرونی ممالک اور اندرونی ملک میں محنت مزدوری کیلئے جانے والے افراد اپنے پیاروں سے رابطہ نہیں کر سکتے انہوں نے مطالبہ کیا کہ اگر حکومت واقعی عوام کو ریلیف نہیں پہنچا سکتی تو کم از کم ان کیلئے مسائل پیدا نہ کئے جائے ایک سوال کی جواب میں انہوں نے کہا کہ موبائل پر دھمکی آمیز کال آنے کا مسئلہ پورے ملک کو درپیش ہے اس لئے ان معاملات کا کچرہ صرف ہمارے ایجنسی پر نہ گرا دیا جائے پڑوسی ملک سے ایجنسی میں موبائل سگنل آنے کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ مشرقی بارڈر کی طرح سیکیورٹی فورسس بھی ڈیورنڈ لائن پر جائمر لگا دے اور اس کیساتھ ملکی موبائل ٹاورز کے مالکان کو پابند بنا دے کہ وہ اپنے موبا ئل سگنل کو پاک افغان بارڈر تک محدود کر سکے انہوں نے کہا کہ ہم نہیں چاہتے کہ قوم میں اضطراب اور بے چینی پیدا ہوں لیکن پھر بھی اگر ایک ہفتے کے اندر اندر ایجنسی میں موبائل سگنل کو بحال نہ کیا گیا تو سیاسی اتحاد کیساتھ مل کر بازاروں میں احتجاجی مظاہرے شروع کریں گے اورپورے ایجنسی میں پہیہ جام ہڑتال کی کا ل دینگے انہوں نے اس بات پر بھی حیرانگی کا اظہار کیا کہ ساتوں ایجنسیوں میں موبائل سروس فعال ہے لیکن باجوڑ ایجنسی میں اس کو بند کرنا سمجھ سے بالاتر بات ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر