بریکوٹ ،دریا برد ہونے والا پل تاحال تعمیر نہ ہوسکا

بریکوٹ ،دریا برد ہونے والا پل تاحال تعمیر نہ ہوسکا

  

بریکوٹ(نمائندہ پاکستان)تحصیل بریکوٹ کے مضافاتی علاقہ کے گو نا گو مسائل سے دو چار ہے ۔بلوکلے یوسی کوٹہ میں گزشتہ چھ مہینے سے سیلابی ریلے کی نظر ہونے والا واحد پل ابھی تک تعمیر نہ ہوسکا تقریبا دو سے چا ر ہزار آبادی کا واحد رابطہ پل کوئی پوچھنے والانہیں گزشتہ تیز بارشوں میں ایک مریض دم توڑگیا مگر راستہ نہ مل سکا ہمارے حلقے کے ایم پی اے 81کے پاس کئی دفعہ گئے مگر کوئی شنوائی نہیں ہوئی کیا ہم پاکستانی باشندے نہیں ہے ہمارا گناہ صرف یہ ہے کہ ہم غریب ہیں پاک آرمی کی تعاون سے ہمارا یہ پل بنا تھا لیکن سیاسی ممبران ہمارا یہ پل نہیں بنا رہے ہیں ان خیالات کا اظہار گاؤ بلوکلے کی مکینوں محمد حسین،عجب خان،سمیع اللہ،عالم خان،ملنگ،شاہ کمین ،عبدلخالق ،حبیب الرحمان اور شیر افضل نے اخباری فورم میں اظہار خیال کر تے ہوئے کیا جبکہ اس موقع پر پی پی پی پی کے رہنما مختار رضا نے بھی ان لوگوں سے اظہار یکجہتی کیا انہوں نے کہا کہ ووٹ لیتے وقت پی ٹی آئی کے ایم پی اے عزیز اللہ گران ہمارا دوست تھا مگر تین سال گزر گئے اس بندے نے ہمارا حال تک نہیں پوچھا یہ پل جوکہ پاک آرمی نے تعمیر کیا تھا بد قسمتی سے چھ ماہ پہلے برساتی نالے کے نظر ہوگیا چھ مہینے گزر گئے مگر اتنے بڑے علاقے کا یہ واحد رابطہ پل نہ بن سکا ہم موجودہ حکمرانوں سے سوال کر تے ہیں کہ ہمارا گناہ کیا ہے صرف یہ کہ ہم غریب ہیں ہمارے پاس بڑے بڑی گاڑیاں نہیں ہیں لیکن یہ بھی ایک حقیقت ہے کہ ان سرمایہ داروں اور جاگیر داروں کا ووٹ ہمارے برابر ہے حلقہ 81کے ایم پی اے جو کہ پی ٹی آئی کا اس کو سب سے زیادہ ووٹ ہم نے دیے لیکن ہمارا یہ معمولی پل جس سے ہمیں بہت تکلیف ہے نہیں بنا رہے ہیں ہم بہت جلد علاقے کے ہزاروں لوگوں کو سڑکو پر لے آئیں گے اس موقع پر مختار رضا خان نے کہا میں آج یہ اعلان کر تا ہوں کہ عزیز اللہ گران اورمراد سعید پریس کانپرنس کرکے یہ کہدے کہ حکومتی فنڈ سے ہم یہ پل نہیں بنا سکتے تو میں ان غریب لوگوں کیلئے اللہ کے رضا کیلئے یہ پل اپنے جیب سے بنادوں گا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -