پلاٹ کے تنازع پر نوجوان قتل ‘ باپ نے بیٹی کی جان لے لی

پلاٹ کے تنازع پر نوجوان قتل ‘ باپ نے بیٹی کی جان لے لی

ڈیرہ غازی خان ‘ بستی ملوک ( نمائندہ خصوصی ‘ نمائندہ پاکستان ) پلاٹ کے تنازع پر نوجوان کو رشتہ داروں نے قتل کر دیا ‘ باپ نے بیٹی کی جان لے لی ۔ ڈیرہ غازی خان سے نمائندہ خصوصی کے مطابق ڈیرہ غازی خان کے نواحی علاقہ موضع عالی والا کے کھووں بھونڈے والی میں سعید احمد کا اپنے رشتہ داروں رفیق ، حنیف ، جمیل اور خلیل کے درمیان کافی عرصہ سے پلاٹ(بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

کا تنازعہ چلا آرہا تھا جس کی رنجش پر گذشتہ روز ملزمان رفیق ، حنیف ، جمیل اور خلیل نے گھر جاتے ہوئے سعید احمد کو گھیر لیا اور فائرنگ کر کے اسے قتل کر دیا ، ملزمان موقع سے فرار ہو گئے پولیس تھانہ کوٹ چھٹہ نے مقدمہ درج کر کے ملزمان کی تلاش شروع کر دی ہے ‘نعش کو پوسٹ مارٹم کے بعد ورثاء کے حوالے کر دیا گیا ہے ۔ بستی ملوک سے نمائندہ پاکستان کے مطابق شوکت کالونی کی رہائشی رخسانہ بی بی دختر عبدالجبار نے تھانہ بستی ملوک کو درخواست دی ہے کہ میری شادی 19/20سال قبل غلام مصظفی سے ہوئی تھی گذاشتہ دنوں ہمارے رشتہ دار نوشیروفیروز (سندھ)میں وفات پا گئے تھے میں اپنے کچھ بچوں کے ہمراہ افسوس کیلئے وہاں پہنچی تھی کہ میرے شوہر نے مجھے کال کر کے اطلاع دی کہ میری بڑی بیٹی زاہدہ بی بی فوت ہو گئی ہے رات کسی نے اس کے ساتھ زیادتی کرنے کے بعد قتل کر دیا ہے۔ میری چھوٹی بیٹی شاہدہ بی بی عمر 13/14سال نے بتایا کی درمیانی شب زاہدہ بی بی کی چیخ وپکار سن کر میری آنکھ کھلی تو والد غلام مصظفی میری بہن کے ساتھ زبردستی کر رہاتھا‘ مجھے ڈر سے نیند نہ آئی تو ابو نے گلہ دبا کر مار دیا اور مجھے بھی ڈرایا کہ اگر کسی کوکچھ بتایا تو تیرا بھی یہی حشر کروں گا اب میں نے اپنے شوہر کے خلاف کاروائی کی کوشش کی تو غلام مصطفی نے مجھے گھر سے نکال دیا اور طلاق دے دی ہے میں نے تھانہ بستی ملوک کو درخواست دی مگر پولیس کاروائی سے گریزاں ہے میرے سسرالی مجھے اور میرے گھر والوں کو قتل کی دھمکیں دے رہے ہیں میری حکام بالا سے اپیل ہے کہ ہمیں تحفظ فراہم کیا جائے اور میری بیٹی کی فبر کشائی کر کے پوسٹ مارٹم کروا کر مقدمہ درج کیا جائے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر