زمیندار کی گھریلو ملازمہ مبینہ بداخلاقی کے بعد قتل ‘ عدالت کا 18 اپریل کو قبر کشائی کا حکم

زمیندار کی گھریلو ملازمہ مبینہ بداخلاقی کے بعد قتل ‘ عدالت کا 18 اپریل کو قبر ...

  

ملتان (خبر نگار خصوصی) جوڈیشل مجسٹریٹ ملتان نے زمیندارکے گھر کام کرنے والی ملازمہ سے مبینہبداخلاقی کے بعد قتل پر 18اپریل کو قبر کشائی کرنے کا حکم دیا ہے اس ضمن میں (بقیہ نمبر51صفحہ12پر )

قادرپورراں کی شمیم مائی نے درخواست دائر کی تھی کہ اسکی پہلے شوہر سے بیٹی سونیا مقامی زمیندار رضوان ظفر کے گھر کام کرتی تھی جس کو جوان ہونے پر کئی بار لے جانے کی کوشش کی لیکن اس کو جانے نہ دیا بعد ازاں وہ دوسرے شوہر کے ہمراہ لاہور چلی گئی اور 14 مارچ کو اطلاع ملی کہ ملزمان رضوان ظفر،جاوید بابراور اشفاق نے اس کی بیٹی کو گولی مار کر قتل کر دیا ہے جبکہ قبل ازیں اس کے ساتھ زیادتی بھی ہوتی رہی ہے اور اس کے پہنچنے سے قبل اس کی بیٹی کو دفن بھی کردیا گیا اور قانونی کارروائی کرنے پر سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دی گئی ہیں اس لئے قبر کشائی کرنیکا حکم دیا ہے جس پر فاضل عدالت نے قبر کشائی کا حکم دیتے ہوئے ایس ایچ او تھانہ قادرپورراں کو قبر پر پہرہ لگانے اورڈاکٹر سمیت دیگر عملہ کی ڈیوٹی لگانے اور دیگر انتظامات کرنے کی بھی ہدایت کر دی ۔

حکم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -