کلبھوشن کو سزا دینے سے ملک دہشتگردی سے پاک ہو جائے گا: سراج الحق

کلبھوشن کو سزا دینے سے ملک دہشتگردی سے پاک ہو جائے گا: سراج الحق

  

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ آج کی مسلم لیگی قیادت کو تحریک پاکستان کے متعلق آگاہی کی ضرورت ہے ،مسلم لیگی قیادت کے بیانا ت پڑھ کر معلوم ہوتا ہے کہ انہیں قیام پاکستان کے حالات کا سرے سے علم ہی نہیں ، وہ دانستہ یا نادانستہ اس وقت کی گانگریس کے نظریاتی بھائی بن گئے ہیں اور مودی کو خوش کرنے کیلئے پاکستان کو لادین ریاست قرار دے رہے ہیں ۔خواجہ آصف جیسے ذمہ دار وزیر کو ایسی باتیں زیب نہیں دیتیں کہ پاکستان کسی خاص مذہب یا مسلک کا ملک نہیں۔ وزیر موصوف کے بیان نے کروڑوں عوام کے دل زخمی کئے،بیانات تحریک آزادی کے لاکھوں شہداء کے خاندانوں کے زخموں پر نمک پاشی کے مترادف ہیں۔پاکستان اسلام کے نام پر بنا تھا اور اس کی خاطر قربانیاں دینے والوں کی زبان پر ایک ہی نعرہ تھا کہ پاکستان کا مطلب کیا لاالہ الا اللہ اور خود قائد اعظم ؒ نے 114بار پاکستان کو اسلام کا قلعہ اور قرآن و سنت کوملک کا دستور قرار دیا تھا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے منصورہ میں جاری واپڈا پیغام یونین کے مختلف سطح کے عہدیداروں کی تربیت گاہ کے شرکاء سے خطاب اور بعد ازاں میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر صدرپیغام یونین ایس ڈی ثاقب اور سیکرٹری جنرل احسان چوہدری بھی موجودتھے۔ انہوں نے کہا کہ کچھ لوگ آج بھی بھارت کی دوستی پر ملک کی سا لمیت کو قربان کرنے پر تلے ہوئے ہیں اور رنگے ہاتھوں پکڑے گئے بھارتی جاسوس کو دودھ پلانے اور شہد کھلانے کی باتیں کرکے سینکڑوں شہریوں کو خون میں نہلانے والوں سے دوستی کا رشتہ مضبوط کرنا چاہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ قوم ریمنڈ ڈیوس کی طرح حکمرانوں کو کلبھوشن کو ملک سے فرار کرانے کا موقع نہیں دے گی۔ ہمارا مطالبہ ہے کہ کلبھوشن کی سازشوں اور نیٹ ورک کو سامنے لایا جائے اور کراچی ،کوئٹہ اور ملک کے دیگر شہر میں ہونے والے دہشت گردی کے واقعات کے پیچھے بھارتی ہاتھ کو بے نقاب کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ اگر کلبھوشن کو سزا ہوگئی تو کوئی نیا کلبھوشن پیدا نہیں ہوگا اور ملک دہشت گردی سے پاک ہوجائے گا اور اگر وہ بچ نکلا تو آئے روز بھارت سے نئے کلبھوشن پاکستانی شہروں میں خون کی ہولی کھیلنے کے لیے داخل ہوا کریں گے ۔انہوں نے کہا کہ لیفٹینٹ کرنل حبیب کو اغواء کیا گیا ہے تو اس کی رہائی ہمارے لئے عزت اور غیرت کا مسئلہ ہے ،اس کا اگر کلبھوشن کی گرفتاری میں کوئی کردار تھا تو اتنے اہم آفیسر کی حفاظت کیوں نہیں کی گئی۔

مزید :

صفحہ آخر -