ملاکنڈ کے تمام دینی مدارس حکومت کے پاس رجسٹرڈ ہیں ،مفتی کفایت اللہ

ملاکنڈ کے تمام دینی مدارس حکومت کے پاس رجسٹرڈ ہیں ،مفتی کفایت اللہ

  

بٹ خیلہ (بیورو رپورٹ )وفاق المدارس اور وحدت المدارس نے ضلع ملاکنڈ کے دینی مدارس سے دوسرے اضلاع کے طلباء کو نکالنے کے حکومتی نوٹس کی سخت مذمت کرتے ہوئے اسے مسترد کر دیا ہے اور دھمکی دی ہے کہ اگر یہ فیصلہ فوری طور پر واپس نہ لیا گیا مدارس کے ہزاروں طلباء و اساتذہ سڑکوں پر احتجاج کریں گے وحدت المدارس ملاکنڈکے صدر اور وفاق المدارس کے ضلعی کنونیئرمفتی کفایت اللہ نے اپنے بیان میں کہا کہ ضلع ملاکنڈ کے تمام دینی مدارس حکومت کے پاس باقاعدہ رجسٹرڈ ہیں اور ان کا مکمل اعداد وشمار تمام حکومتی وریاستی اداروں کے پاس موجود ہے جبکہ علاقے کے تمام مدارس کے ذمہ داران اس سلسلے میں اپنا ہر قسم کا تعاون کررہے ہیں انھوں نے واضح کیا کہ اگر کسی بھی ادارے کو کسی بھی دینی مدرسے کے کسی استاد یا طالب علم کے بارے میں کوئی شکایت ہے یا وہ کسی جرم میں ملوث و سہولت کار ہے تو ہم بلا امتیاز اس کے خلاف کاروائی کے حق میں ہیں اور اس سلسلے میں حکومت کے ساتھ ہیں تاہم جس طرح ہر پاکستانی کو پورے ملک سمیت باہر دنیا میں تعلیم کے حصول کی اجازت ہے اسی طرح کسی بھی صوبے اور ضلع کا طالب علم ملک کے کسی بھی ضلع کے دینی مدرسے میں حصول تعلیم کا آئینی و قانون حقدار ہے انھوں نے کہا کہ اس صورت حال کی وجہ سے دینی مدارس میں پائی جانے والی تشویش کے پیش نظر جمعیت علما اسلام کی ضلعی مجلس عاملہ نے اپنا ہنگامی اجلاس کل بروز ہفتہ سخا کوٹ میں جبکہ دینی مدارس کے ذمہ داروں کا اہم اجلاس اتوار16اپریل کو بٹ خیلہ میں طلب کر لیا گیا ہے ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -