گلے ہفتے کیوبا میں کاسترو خاندان کے 60 سالہ دور اقتدار کا خاتمہ ہوجائیگا

گلے ہفتے کیوبا میں کاسترو خاندان کے 60 سالہ دور اقتدار کا خاتمہ ہوجائیگا

ا

ہوانا(این این آئی)کیوبا میں پہلے فیڈل اور پھر راؤل کاسترو کی صورت میں کاسترو خاندان کا ساٹھ سالہ دور اقتدار اگلے ہفتے ختم ہو جائے گا۔ کیوبا میں کاسترو خاندان کے دور حکومت کے(بقیہ نمبر46صفحہ7پر )

ان چھ عشروں کے دوران امریکا میں پندرہ صدور آئے اور چلے بھی گئے۔میڈیارپورٹس کے مطابق بحیرہ کیریبیین کی اس جزیرہ ریاست میں ان دنوں اقتدار کی تبدیلی کی تیاریاں جاری ہیں۔ موجودہ صدر راؤل کاسترو آئندہ ہفتے اپنے عہدے سے علیحدہ ہو جائیں گے، تو حکومت ایک نئے ملکی رہنما کے حوالے کیے جانے کے ساتھ ہی اس ملک میں کاسترو خاندان کا چھ دہائیوں پر پھیلا ہوا دور اقتدار بھی اپنے اختتام کو پہنچ جائے گا۔سیاسی تجزیہ کاروں کے مطابق راؤل کاسترو کے جانشین صدر ممکنہ طور پر 57 سالہ میگوئیل دیاز کانیل ہوں گے، جو اس وقت ملک کے اول نائب صدر بھی ہیں۔ لیکن یہ بات یقینی ہے کہ وہ اس کمیونسٹ ریاست میں مستقبل کے تمام اہم فیصلے کرنے والی واحد شخصیت نہیں ہوں گے۔ماہرین کے مطابق راؤل کاسترو کیوبا کی انتہائی طاقت ور کمیونسٹ پارٹی کی اگلی کانگریس تک، جو 2021ء میں ہو گی، اس پارٹی کی قیادت کرتے رہیں گے۔ اس کا ایک واضح مطلب یہ ہے کہ وہ ابھی مزید چند برس تک تمام اہم سیاسی فیصلوں پر پوری طرح اثر انداز ہو سکیں گے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...