سپریم کورٹ ایسے ہی فیصلے کی توقع تھی ، ماضی میں بھی مقابلہ کیا اب بھی تیار ہیں ، نواز شریف

سپریم کورٹ ایسے ہی فیصلے کی توقع تھی ، ماضی میں بھی مقابلہ کیا اب بھی تیار ہیں ...

 لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ انہیں عدالتوں سے اسی قسم کے فیصلے کی توقع تھی اس سے ظاہر ہوتا ہے میری ذات ہی ہدف ہے۔جاتی امرا میں کارکنان سے غیررسمی گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیراعظم نوازشریف کا سپریم کورٹ کے فیصلے کے حوالے سے کہنا تھا کہ عدالتوں نے اسی قسم کے فیصلوں کی توقع تھی،عدالتوں کے ذریعے عوام سے ان کی قیادت نہیں چھینی جاسکتی ہے، ماضی میں بھی ہمارے راستے میں رکاوٹیں کھڑی کی جاتی رہیں لیکن ہم نے مقابلہ کیا اور اب بھی تیار ہیں، نااہلی کے فیصلے عوامی مشن سے نہیں ہٹا سکتے، کارکنان بھی صبر و استقامت کا مظاہرہ کرتے ہوئے جماعت کی کال کا انتظار کریں۔

نوازشریف

لاہور(جنرل رپورٹر)سپریم کورٹ کے تاحیات نا اہلی کے فیصلے کے بعد مسلم لیگ (ن) کے اہم مرکزی رہنماؤں نے سابق وزیر اعظم وپارٹی قائد محمد نواز شریف سے ٹیلیفونک رابطے کر کے بھرپور اظہار یکجہتی اور مشکل وقت میں ساتھ دینے کے عزم کا اظہار کیا ۔ ذرائع کے مطابق سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد پارٹی کی پہلی صف کے رہنماؤں نے نواز شریف کو ٹیلیفون کر کے نہ صرف اس فیصلے پر اپنے تحفظات کا اظہار کیا بلکہ پارٹی قائد سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے انہیں یقین دہانی کرائی کہ وہ مشکل کی اس گھڑی میں ان کے شانہ بشانہ ہیں۔ ذرائع کے مطابق سپریم کورٹ کے حالیہ فیصلے کے بعد پارٹی کا اہم اجلاس بھی بلایا جائے گا جس میں آئندہ کے حوالے سے حکمت عملی مرتب کی جائے گی ۔

مزید : صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...