وہی ہوا جس کا ڈر تھا، امریکہ ، برطانیہ اور فرانس نے مل کر شام پر حملہ کردیا اور پھر۔۔۔ سب سے خوفناک خبر آگئی

وہی ہوا جس کا ڈر تھا، امریکہ ، برطانیہ اور فرانس نے مل کر شام پر حملہ کردیا ...
وہی ہوا جس کا ڈر تھا، امریکہ ، برطانیہ اور فرانس نے مل کر شام پر حملہ کردیا اور پھر۔۔۔ سب سے خوفناک خبر آگئی

  

دمشق (ڈیلی پاکستان آن لائن) شام میں کیمیائی حملوں کے استعمال کو جواز بنا کر امریکہ نے برطانیہ اور فرانس کی مدد سے شام پر حملہ کردیا ہے ، حملہ میزائلوں کے ذریعے کیا گیا جس میں سائنسی تحقیقی ادارے اور کیمیائی ہتھیاروں کے ذخیرے کو نشانہ بنایا گیا ۔

خبر رساں ایجنسیوں کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے رات گئے اپنے خطاب میں شام کے خلاف فوجی کارروائی کا اعلان کیا، جس کے ساتھ ہی شامی دارالحکومت دمشق میں کئی دھماکے سنے گئے۔امریکا کے ٹام کروز اور برطانیہ کے اسٹروم شیڈو میزائلز نے دمشق اور حمص کے قریب مختلف فوجی تنصیبات کو نشانہ بنایا۔امریکا کے دفاعی حکام کے مطابق حملے میں شام کے سائنسی تحقیقی ادارے اور کیمیائی ہتھیاروں کے ذخیرے کو بھی نشانہ بنایا گیا۔ امریکی میرین کور کے جنرل ڈینفورڈ نے واضح کیا کہ حملوں میں جیٹ طیاروں نے حصہ لیا اور روس کو ان حملوں اور اہداف کے بارے میں پہلے سے آگاہ نہیں کیا گیا تھا۔

امریکہ اور برطانیہ کے شام پر میزائل حملے، بشارالاسد کی فوجوں نے کتنے میزائلوں کو راستے میں ہی مار گرایا ؟ جان کر ڈونلڈ ٹرمپ کے ہوش اڑ جائیں گے

دوسری جانب امریکی وزیر دفاع جیمز میٹس نے پینٹاگون میں نیوز بریفنگ کے دوران بتایا کہ امریکہ کے حملے کے نتیجے میں تاحال کسی جانی نقصان کی کوئی خبر نہیں ہے ، یہ فی الحال پہلا اور آخری حملہ تھا جس کے بعد مزید حملوں کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

خیال رہے کہ شام کے علاقے دوما میں گزشتہ دنوں بشارالاسد کی فوج نے عام شہریوں پر کیمیائی گیس (کلورین) کا حملہ کیا تھا جس کے نتیجے میں بچوں اور خواتین سمیت 70 شہری ہلاک ہوئے۔ امریکہ نے اس حملے پر شدید رد عمل کا اظہار کیا اور میزائل حملوں کی دھمکی دی تھی جس کے جواب میں روس نے بھرپور رد عمل دینے کا اعلان کیا تھا۔

مزید : Breaking News /اہم خبریں /بین الاقوامی /عرب دنیا