”قربان جاواں میں سرکار دے مرید تے وی ۔۔۔“ معروف صحافی اجمل جامی نے سینئر صحافی کی علامہ خادم حسین رضوی کیساتھ ملاقات کی تصویر شیئر کر دی، یہ کون سا صحافی ہے اور کیا کر رہا ہے؟ سوشل میڈیا پر تہلکہ مچ گیا

”قربان جاواں میں سرکار دے مرید تے وی ۔۔۔“ معروف صحافی اجمل جامی نے سینئر ...
”قربان جاواں میں سرکار دے مرید تے وی ۔۔۔“ معروف صحافی اجمل جامی نے سینئر صحافی کی علامہ خادم حسین رضوی کیساتھ ملاقات کی تصویر شیئر کر دی، یہ کون سا صحافی ہے اور کیا کر رہا ہے؟ سوشل میڈیا پر تہلکہ مچ گیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) معروف صحافی و اینکر پرسن اجمل جامی نے تحریک لبیک کے سربراہ علامہ خادم حسین رضوی کیساتھ ایک ایسے سینئر صحافی کی ملاقات کی تصویر شیئر کر دی ہے کہ سوشل میڈیا پر ہنگامہ برپا ہے۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔سہانا خان آئی پی ایل میچ دیکھنے سٹیڈیم پہنچیں تو ان کے جوتے دیکھ کر سب کے منہ کھلے کے کھلے رہ گئے، ان کی قیمت کیا ہے؟ جان کر آپ کچھ دیر کیلئے سانس لینا ہی بھول جائیں گے 

اجمل جامی نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اوریا مقبول جان کی علامہ خادم حسین رضوی کیساتھ ملاقات کی تصویر شیئر کی جس میں وہ انتہائی باادب انداز میں علامہ خادم حسین رضوی کے ساتھ مصافحہ کر رہے ہیں اور لکھا ”قربان جاواں میں سرکار دے مرید تے وی۔۔۔!“

یہ تصویر سامنے آنے کے بعد ٹوئٹر صارفین کی جانب سے دلچسپ تبصروں کا سلسلہ جاری ہے اور ہر کوئی اپنے انداز میں دل کی بات کہنے میں مصروف ہے۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔بھارت میں 8 سالہ مسلمان بچی کو اجتماعی زیادتی کے بعد قتل کر دیا گیا اور جب ثانیہ مرزا نے آواز اٹھائی تو آگے سے بھارتیوں نے انتہائی شرمناک ترین کام کر دیا 

عبدالمقیت نامی صارف نے لکھا ”قربان جاﺅں آپ کے تبصرے پر بھی۔۔۔ کسی کے مصافحے کو کس انداز میں پیش کر رہے ہیں آپ۔۔۔“

تیمور نواز نے لکھا ”تے اسی توہاڈے تے“

طاہر عباس نے لکھا ”مرشد لگتا ہے کہ عمر چیمہ کی جگہ لینا چاہ رہے ہیں“

عثمان رضا نے لکھا ”اختلاف رائے ان کا حق ہے۔ دوستانہ طور پر بتا رہا ہوں کہ اجمل جامی ایک اچھا لڑکا ہے اور حس مزاح بھی خوب رکھتا ہے۔ انہوں نے عمر چیمہ کی طرح کبھی بھی کسی پر ذاتی حملہ نہیں کیا“

وقاص رحمان نے لکھا ”ذرا غور کیجئے، مجھے تو تصویر ترمیم شدہ لگتی ہے“

عمر باجوہ نے لکھا ”یقینا آپ کی قربانی جائز نہیں“

امجد علی نے لکھا ”اوریا صاحب گالیوں والے کے مرید بن گئے“

فضل الرحمان نے لکھا ”میرے خیال سے یہ تصویر فوٹو شاپڈ ہے“

قاضی تنویر جمال نے لکھا ” لوگ اللہ کی عبادت چھوڑ شرک میں پڑ گئے ہیں، اسی پیری فکیری نے پاکستان کا بیڑہ غرق کر دیا ہے“

خرم نے لکھا ”حد ہوتی ہے ویسے بغض کی بھی۔۔۔ وہیل چیئر پر بیٹھے بندے کو جھک کر ہی ملو کے ناں!!! آپ ہوتے تو کیسے ملتے ؟“

شیمپی نامی صارف نے لکھا ”کسی سے مصافحہ کرنے کے بعد اس کے کردار کا کیسے اندازہ لگایا جا سکتا ہے؟ جبکہ اوریا مقبول جان کے میں نے کافی کالم پڑھے ہیں، اسلامی پوائنٹ آف ویو سے بہتر ہوتے ہیں“

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /پنجاب /لاہور