وہ لوگ جنہوں نے لاٹریاں جیتیں لیکن یہ کامیابی ان کی زندگی کی تباہی کا باعث بن گئی

وہ لوگ جنہوں نے لاٹریاں جیتیں لیکن یہ کامیابی ان کی زندگی کی تباہی کا باعث بن ...
وہ لوگ جنہوں نے لاٹریاں جیتیں لیکن یہ کامیابی ان کی زندگی کی تباہی کا باعث بن گئی

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) ہم کہہ سکتے ہیں کہ خوش قسمت ہوتے ہیں وہ لوگ جن کی لاٹری نکلتی ہے تاہم لاٹری نکلنا کئی لوگوں کے لیے بدقسمتی بھی لے کر آتا ہے کہ ان کے ہنستے بستے گھر اجڑ جاتے ہیں۔ ایسے ہی کچھ جوڑوں کے بارے میں آج ہم آپ کو بتانے جا رہے ہیں جو بیٹھے بٹھائے امیر ہوئے لیکن ان کی ازدواجی زندگی اس سے تباہ ہو گئی۔ دی مرر کے مطابق ان میں پہلا جوڑا 71سالہ کولن اور62سالہ کرسٹین ویئر ہیں جن کی 2011ءمیں لاٹری نکلی اور وہ کروڑ پتی بن گئے تاہم چند سال بعد ہی ان کی 38سالہ ازدواجی زندگی کا خاتمہ ہو گیا۔

اگلی مثال 35سالہ مائیکل کیرول کی ہے جس نے لاٹری میں 1کروڑ پاﺅنڈ جیتے لیکن اس کی عیاشیوں نے اس کی خوش قسمتی کو بدقسمتی میں بدل دیا۔ اس نے یہ تمام رقم لگژری کاروں اور پارٹیوں پر اڑا دی اور چند سال بعد ہی واپس سڑک پر آ گیا۔ اب وہ ایک بار پھر کوئلہ مرچنٹس فرمز پر ملازمت کر رہا ہے، دن بھر لکڑی کاٹتا ہے اور ایندھن کے بھاری بیگ اٹھاتا ہے۔ اب وہ 10پاﺅنڈ فی گھنٹہ کی نوکری کر رہا ہے۔

پھر اینڈریان اور جیلیان بے فورڈ کے نام آتے ہیں جن کی 2012ءمیں 14کروڑ 80لاکھ پاﺅنڈ کی لاٹری نکلی لیکن اس لاٹری کی وجہ سے ان کی ازدواجی زندگی کو کسی کی نظر لگ گئی اور وہ چند سال کے لڑائی جھگڑوں کے بعد 2017میں الگ ہو گئے۔ راجر اور لارا گریفتھس کی کہانی بھی بالکل ایسی ہی ہے۔ ان کی 2005ءمیں 18لاکھ پاﺅنڈ کی لاٹری نکلی تھی۔ انہوں نے پراپرٹی کے کاروبار میں سرمایہ کاری کی لیکن پراپرٹی کی قیمتیں اچانک کم ہو جانے کی وجہ سے ان کی تمام رقم ڈوب گئی۔ یوں پہلے انہوں نے رقم سے ہاتھ دھوئے اور 2012ءمیں ان کی طلاق بھی ہو گئی۔ایسی اور بھی درجنوں کہانیاں ہیں جن میں لاٹری جیتنے کے بعد میاں بیوی میں رقم کے معاملات پر لڑائی جھگڑے ہوئے اور جو بالآخر طلاق پر منتج ہوئے اور ایسی بھی کئی مثالیں ہیں کہ لاٹری جیتنے کے بعد لوگ رقم کو سنبھال نہ پائے اور جس طرح راتوں رات امیر ہوئے تھے اسی طرح رقم لٹا کر دنوں میں واپس کنگال ہو گئے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /برطانیہ