بھارتی فورسز کی ایل او سی پر پھر بلا اشتعال فائرنگ، کمسن بچہ، شہید خاتون سمیت 4شہری زخمی

      بھارتی فورسز کی ایل او سی پر پھر بلا اشتعال فائرنگ، کمسن بچہ، شہید خاتون ...

  

راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک،این این آئی) بھارتی فورسز کی جانب سے ایل او سی پر سیریز فائر معاہدے کی خلاف روزیوں اور بلا اشتعال فائرنگ کے نتیجے میں دو سالہ معصوم بچہ شہید اور خاتون سمیت چار شہری زخمی ہوگئے، پاک فوج نے موثر انداز میں بھارتی چوکیوں کو نشانہ بنایا۔ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق بھارتی فورسز کی جانب سے ایل او سی پرسیز فائر کی خلاف ورزیوں کا سلسلہ گزشتہ روز بھی جاری رہا،بھارتی فوج نے ایل او سی کے ڈھڈنیال، چری کوٹ، رکھ چکری سیکٹر پرشہری آبادی کو نشانہ بنایا،بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ سے ڈھنڈ نہال کا دو سالہ معصوم بچہ محمد حسیب شہید اور خاتون سمیت چار شہری زخمی ہوگئے۔زخمیوں کو علاج کیلئے طبی مراکز منتقل کردیا گیا ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج کی جانب سے بھارتی اشتعال انگیزیوں پر بھر پور جوابی کارروائیاں کی گئیں۔ دوسری جانب پاکستان نے لائن آف کنٹرول پر سیز فائر معاہد ے کی خلاف وزیوں اور بلا اشتعال فائرنگ کے نتیجے میں شہادتوں کے واقعہ پر بھارتی ناظم الامور کو دفتر خارجہ طلب کر کے شدید احتجاج کیا۔ترجمان دفتر خارجہ عائشہ فاروقی کے مطابق بھارت کی طرف سے جنگ بندی کی خلاف ورزیوں پر سخت احتجاج کیا گیا۔ ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق بھارتی ناظم الامور گورو اہلووالیا کو ڈی جی برائے جنوبی ایشیاء زاہد حفیظ نے طلب کیا۔ ترجمان دفتر خارجہ نے کہاکہ بھارت کی طرف سے مسلسل ایل او سی اور ورکنگ باونڈری پر جنگ بندی کی خلاف ورزی کی جارہی ہے، سلسلہ فوری روکا جائے۔

بھارتی فائرنگ

مزید :

صفحہ اول -