تاجر ٹریڈ ایکشن کمیٹی کے وفد کی کمشنر پشاور سے ملاقات

تاجر ٹریڈ ایکشن کمیٹی کے وفد کی کمشنر پشاور سے ملاقات

  

پشاور(سٹی رپورٹر)تاجرٹریڈایکشن کمیٹی کی آٹھ رکنی وفدنے گزشتہ روزکمشنرپشاورامجدعلی خان سے انکے دفترمیں ملاقات کی اورانہیں لاک ڈان کے پیش نظرتاجروں کودرپیش مسائل سے متعلق تفصیلی طورپرآگاہ کیاگیاوفدمیں مجیب الرحمان،شرافت علی مبارک،غلام بلال جاوید،امین حسین بابر،حبیب اللہ زائد،خالدایوب،حاجی وارث آفریدی،شاہدخان شامل تھے وفدنے لاک ڈان میں ایک ہفتے 21اپریل تک مزیدتوسیع پرتحفظات کااظہارکیاجس پرکمشنرنے ڈپٹی کمشنرعلی محمداصغرکی سرپراہی میں تاجررہنماں سے مذاکرات کیلئے کمیٹی تشکیل دی جوکہ تاجروں کے تحفظات اورلاک ڈان میں نرمی سے متعلق سفارشات پیش کرینگے وفدکے شرکا نے کمشنرکواپنے تحفظات سے آگاہ کرتے ہوئے کہاکہ آئے روزلاک ڈان میں مزیدتوسیع کرنے سے چھوٹے دکانداروں کابیڑہ غرق ہوگیاہے کیونکہ بنددکانوں پربھاری بھرکم کرایوں کی ادائیگی کی وجہ سے انہیں مالی مشکلات کاسامناکرناپڑرہاہے جس کیلئے حکومت نے اب تک تاجروں کوریلیف دینے کیلئے کوئی اقدامات نہیں اٹھائے جوکہ ظلم وزیادتی ہے انکاکہناتھاکہ تاجرمزیدکسی بھی لاک ڈان کے متحمل نہیں ہوسکتے لہذاحکومت لاک ڈان میں نرمی کرے اوردکانداروں کوحفاظتی اقدامات کے ساتھ دکانیں کھولنے کی اجازت دے انہوں نے مزیدکہاکہ رمضان کی آمدآمدہے چنانچہ حکومت درزی،کپڑے کی دکانوں اورجیولرزکی دکانوں سمیت دیگرضروریات کے مطابق دکانوں کوکھولنے کی اجازت دے اوریہ کہ ساتھ میں ان دکانداروں کیلئے حکومت ایس اوپی بنائے جس پرتاجرتنظیمیں من وعن عملدرآمدکرینگی انہوں نے کہاکہ حکومت ٹرائل بیس پرمرحلہ وارترتیب بناتے ہوئے کاروبارکھولنے کی اجازت دے لہذاحکومت اورضلعی انتظامیہ کے ساتھ بھرپورتعاون کریں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -