دراز نے اورسیزپاکستانی ڈونرز کے لئے بین الاقوامی پے منٹ گیٹ وے کھول دیئے

  دراز نے اورسیزپاکستانی ڈونرز کے لئے بین الاقوامی پے منٹ گیٹ وے کھول دیئے

  

لاہور(پ ر)دراز نے پاکستان میں غیر سرکاری تنظیموں اور یومیہ اجرت پر کام کرنے والے افراد اور پسماندہ علاقوں کے خاندانوں کو عطیات دینے کے حوالے سے سمندر پار پاکستانیوں کے لئے بین الاقوامی پے منٹ گیٹ وے کا آغاز کیا ہے۔ یہ اقدام کورونا وائرس کے اثرات سے نمٹنے کے لئے اٹھایا گیا ہے۔ معروف ای کامرس پلیٹ فارم کے سی ایس آر ونگ دراز کیئرز نے حال ہی میں ایدھی فاؤنڈیشن، انڈس ہسپتال، یونائیٹڈ نیشنز ایسوسی ایشن آف پاکستان، اخوت فاؤنڈیشن، شوکت خانم میموریل ٹرسٹ، الخدمت، ایس آئی یو ٹی، ڈیف ریچ، اورینج ٹری اور رزق سمیت متعدد بہتر ساکھ کی حامل غیر سرکاری تنظیموں کے ساتھ مل کر عطیہ مہم ”آیئے مل کر پاکستان کی مدد کریں“ کا آغاز کیا۔ پلیٹ فارم ان عطیات پر کسی قسم کا کمیشن وصول نہیں کر رہا جو براہ راست این جی اوز کو منتقل کئے جا رہے ہیں۔ دراز کا مقصد پانچ ہزار سے زائد خاندانوں کی مدد کرنا ہے اور صارفین کی جانب سے بھیجے گئے عطیات کی مدد سے یہ پہلے ہی 1300 خاندانوں تک پہنچ چکا ہے۔ بین الاقوامی پے منٹ گیٹ وے کھول کر دراز نے دنیا بھر میں مقیم پاکستانیوں کو اپنے ویزا یا ماسٹر کارڈ یا کسی بھی بینک کے ڈیبٹ کارڈ کو استعمال کرتے ہوئے عطیات دینے کے قابل بنا دیا ہے۔ دراز پاکستان کے سی ایس آر کی سربراہ المیرا بٹ نے کہا کہ ہمارا مقصد سمندر پار پاکستانیوں کو ایک آسان پلیٹ فارم مہیاء کرنا ہے جس کے ذریعے وہ اس غیر یقینی صورتحال کے دوران انتہائی پسماندہ افراد کو عطیہ دے کر ان کی مدد کر سکیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں یقین ہے کہ اگر ہم سب مل کر کھڑے ہوں تو ملک مضبوط ہو سکے گا۔ انہوں نے کہا کہ دراز میں ہم قوم کی مدد کے لئے اپنا کردار ادا کرنے کے لئے تیار ہیں اور ہمیں یقین ہے کہ ہم ان اثرات کو ختم کرنے میں کامیاب ہو جائیں گے۔ دراز کے ذریعے عطیہ کرنے کے حوالے سے صارفین تین مرحلوں پر مشتمل سادہ عمل اختیار کر سکتے ہیں۔ دراز پر لاگن کریں اور دراز کیئرز پیج پر جائیں۔ کسی بھی این جی او کے عطیہ کا پیکیج منتخب کریں اور ترجیحی بینک کارڈ یا ای۔والٹس کے ساتھ ادائیگی مکمل کریں۔

مزید :

کامرس -