اومنی گروپ کرپشن کیس، ملزم اعجاز ہارون کی ضمانت کا فیصلہ چیلنج

اومنی گروپ کرپشن کیس، ملزم اعجاز ہارون کی ضمانت کا فیصلہ چیلنج

  

اسلام آباد (این این آئی)نیب نے جعلی بنک اکاؤنٹس کے ملزم اعجاز ہارون کی ضمانت کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا۔ پیر کو دائر درخواست میں موقف اختیار کیا گیاکہ اسلام آباد ہائیکورٹ کا 13 فروری کا فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے۔ہائیکورٹ نے اس تناظر میں سپریم کورٹ کے فیصلوں کو نظر انداز کیا۔ اعجاز ہارون بطور سیکرٹری اوورسیز کوآپریٹو ہاؤسنگ(بقیہ نمبر56صفحہ6پر)

سوسائٹی کرپشن کے مرتکب ہوئے۔موقف اختیار کیا گیاکہ اعجاز ہارون نے اومنی گروپ کیساتھ ملکر 144 ملین سے زائد کی کرپشن کی۔دریں اثناسپریم کورٹ نے سپیکر صوبائی اسمبلی مشتاق غنی کے خلاف توہین عدالت کی درخواست نمٹا دی۔ پیر کو جسٹس عمر عطا بندیال کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے سماعت کی۔ عدالت نے کہاکہ درخواست گزارکفایت اللہ آفریدی اپنی ترقی کے لئے سروس ٹریبونل سے رجوع کریں۔ دور ان سماعت وکیل درخواست گزار نے عدالتی حکم کی خلاف ورزی پر توہین عدالت کی درخواست دائر کی تھی۔

اومنی گروپ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -