کورونا وائرس کیخلاف جنگ، پولیس اہلکاروں کو بھی پابند کر دیا گیا مگر کس بات کیلئے؟ زبردست خبر آ گئی

کورونا وائرس کیخلاف جنگ، پولیس اہلکاروں کو بھی پابند کر دیا گیا مگر کس بات ...
کورونا وائرس کیخلاف جنگ، پولیس اہلکاروں کو بھی پابند کر دیا گیا مگر کس بات کیلئے؟ زبردست خبر آ گئی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) کورونا وائرس کی موذی وباءکیخلاف برسرپیکار پولیس اہلکاروں کو وائرس سے بچانے کیلئے سی سی پی او نے شہر میں سیل شدہ علاقوں میں تعینات اہلکاروں کیلئے پی پی ای کٹ سمیت دیگر حفاظتی اقدامات لازمی قرار دیدئیے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق دنیا بھر میں تباہی مچانے والے کورونا وائرس نے پاکستان میں بھی ڈیرے ڈال لئے اور گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں کورونا سے مزید 5 افراد موت کے منہ میں چلے گئے ہیں جس کے بعد ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 96 ہوگئی ہے جبکہ نئے کیسز سامنے آنے کے بعد مہلک وائرس میں مبتلا مریضوں کی تعداد 5716 تک پہنچ چکی ہے۔

لاہور میں کورونا کے مریضوں کی تعداد 458 جبکہ 11 ہلاکتیں ہوئی ہیں جبکہ پنجاب بھرمیں 2826 افراد متاثر اور 24 افراد جاں بحق ہوئے ہیں اور 508 افراد صحت یاب ہو چکے ہیں۔ کورونا کے خلاف لڑنے والی فرنٹ لائن فورس بھی کورونا وائرس کا شکار ہونے لگی، سمن آباد کے علاقے سکندریہ کالونی میں تعینات پولیس اہلکار میں بھی وائرس کی تصدیق ہوگئی ہے جس کے بعد کورونا کے شکار پولیس اہلکاروں کی تعداد6ہو گئی۔لاہور پولیس اہلکاروں میں کورونا وائرس کی تصدیق کے بعد سی سی پی او لاہور ذوالفقار حمید ایکشن میں آگئے ہیں جنہوں نے شہر میں سیل شدہ علاقوں میں تعینات پولیس اہلکاروں کیلئے پی پی ای کٹ سمیت دیگر حفاظتی اقدامات لازمی قرار دیدئیے ہیں۔

سی سی پی او ذوالفقار حمید کا کہنا ہے کہ شہر میں ضلعی انتظامیہ کی جانب سے کورونا پھیلاو¿ کے خدشے کے باعث 13 علاقوں کو جزوی طور پر سیل کر کے وہاں پولیس اہلکار تعینات کئے گئے ہیں جو اہلکار حفاظتی کٹ استعمال نہیں کرتا اس کے خلاف محکمانہ کارروائی عمل میں لائی جائے۔انہوں نے تمام ایس پیز کو اپنے متعلقہ سیل شدہ علاقوں میں تعینات اہلکاروں کو سرپرائز وزٹ کر کے چیک کرنے کی ہدایات جاری کر دیں۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -کورونا وائرس -