قائمہ کمیٹی برائے نیشنل ہیلتھ کاکورونا ویکسین کی تیاری کا عمل جلد شروع کرنے کا عندیہ 

قائمہ کمیٹی برائے نیشنل ہیلتھ کاکورونا ویکسین کی تیاری کا عمل جلد شروع کرنے ...

  

 اسلام آ باد (آ ئی این پی) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے نیشنل ہیلتھ سروسز کو وزیر اعظم کے معاون خصو صی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان، قومی ادارہ صحت کے ایگزیکٹو ڈائریکٹرمیجر جنرل عامر اکرام، وزارت صحت ودیگر حکام نے آ گاہ کیا ہے کہ نیشنل انسٹی ٹیوٹ آ ف ہیلتھ  میں کورونا ویکسین کی تیاری کا عمل جلد شروع کیا جائیگا  پمز کی نجکاری نہیں کی جا رہی،پمز میں شام کو  ڈاکٹر فیس لے کر مریضوں کو چیک کرسکیں گے یہ ماڈل اس وقت  ملٹری  کے ہسپتالوں میں چل رہا ہے  وزیر اعظم نے کراچی کے تین ہسپتالوں کا معاملہ حل کرنے کی  ہدایت کی ہے،وزیر اعلیٰ سندھ سے مل کر معاملہ حل کر لیں گے  اگر سندھ حکومت خود ہسپتال چلانا چاہتی ہے تو ہمیں اعتراض نہیں ہے قانون کے تحت معاملہ کا حل نکالنے کی کوشش کی جائے گی،ہم اداروں میں مزید بہتری کے خواہاں ہیں قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے نیشنل ہیلتھ سروسز کا  اجلاس خالد مگسی کی زیر صدارت ہواقومی ادارہ صحت کے ایگزیکٹو ڈائریکٹرمیجر جنرل عامر اکرام نے کمیٹی کو آ گاہ کیا کہ کورونا ویکسین جلد این آئی ایچ میں بننا شروع ہو جائیگی این آئی ایچ کے ایکٹ میں ترمیم بھی کی جا رہی ہے  نئے قانون کے تحت 7 ایگزیکٹو ڈائریکٹر اور ایک چیف ایگزیکٹو ڈائریکٹر ہو گا، این آئی ایچ میں شامل ہونے والے اداروں کے ملازمین تین ماہ کے اندرگولڈن ہینڈ شیک لے سکیں گے کمیٹی ممبران نے کہا کہ این آئی ایچ میں ویکسین بنے جا رہی ہے یہ خوش آئند ہے اجلاس میں پاکستان میڈیکل کمیشن کے باہر طلباء کے دھرنا  اور سکالرشپ کے تحت 265  سیٹوں کا معاملہ پر بھی غو ر کیا گیا پی ایم سی حکام نے بتایا کہ 265 بچوں کی فہرست دیر سے ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے بھیجی ہے 75 بچے ایسے بھی ہیں جنہوں نے ٹیسٹ پاس نہیں کیا  چیئرمین کمیٹی نے پی ایم سی کونسل کو معاملہ جلد حل کرنے کی سفارش کر دی ہائیر ایجوکیشن کمیشن  حکام نے کمیٹی کو بتایا کہ ہم لسٹ پی ایم سی کو بھیج چکے ہیں اعتراضات والی فہرست دوبارہ بھیج دینگے اجلا س کے دوران وفاقی گرینڈ گرہیلتھ الائنس کے چیئرمین ڈاکٹر اسفندنے کہا کہ ہم ہسپتالوں کے حوالے سے میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوشن آرڈیننس کی ہم نے مخالفت کی وزارت صحت حکام نے کہا کہ پمز کی نج کاری نہیں کی جا رہی،ڈاکٹر ویسے بھی باہر جا کر پریکٹس کر رہے ہیں،پمز میں شام کو پریکٹس کر لیں گے اس وقت یہ ماڈل ملٹری ہسپتالوں میں چل رہا ہے،چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ آپ ڈاکٹروں پردباؤ ڈال رہے ہیں جب ان کی فیس کم ہو گی تو علاج بھی صیح نہیں کریں گے اجلاس میں وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت فیصل سلطان  نے کمیٹی کو بریفنگ  دیتے ہوئے کہا کہ کراچی کے تین ہسپتالوں کا معاملہ حل کرنے کی وزیراعظم نے ہدایت کر دی  وزیر اعلی سندھ سے مل کر حل معاملہ حل کر لیں، وزیراعظم نے کہا ہے جیسے وہ چاہتے ہیں، معاملے کو دیکھ لیں،ہسپتالوں کے معاملے پر وزیراعلی سندھ کی شاید وزیراعظم سے بات ہوئی ہے،اگر سندھ حکومت  خود چلانا چاہتی ہے تو ہمیں اعتراض نہیں ہے،سپریم کورٹ کے فیصلے کے ہم پابند تھے،اور ہیں،اب مل کر قانون کے تحت حل نکالنے کی کوشش کی جائے گی،ہم اداروں میں مزید بہتری لانا چاہتے ہیں۔ 

قائمہ کمیٹی نیشنل ہیلتھ

مزید :

صفحہ آخر -