پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن نے وزیر خزانہ سے ملاقات کا وقت مانگ لیا 

پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن نے وزیر خزانہ سے ملاقات کا وقت مانگ لیا 

  

 اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن نے وزیر خزانہ حماد اظہر سے ملاقات کا وقت مانگ لیا۔ ذرائع کے مطابق پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن نے وزیر خزانہ حماد اظہر سے ملاقات کا وقت مانگ لیا۔ذرائع کے مطابق پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن نے پنجاب حکومت کے اقدامات پر شدید تحفظات ظاہر کر دیئے۔ ذرائع کے مطابق شوگر ملز کے مطابق پنجاب حکومت کے اقدامات سے ملیں، سیلز ٹیکس، انکم ٹیکس اور کسانوں کو ادائیگیاں بند ہو جائیں گی، ایف بی آر بلاجواز اربوں روپے ٹیکس ادائیگی کے نوٹس بھیج رہا ہے، نیب اور ایف آئی اے انکوائری کیلئے طلب کر رہے ہیں، چینی کی پیداواری لاگت 104 روپے فی کلو ہے۔ شوگر ملزم کے مطابق چینی 80 روپے فی کلو نہیں بیچ سکتے، حکومت پنجاب نے گنے کی قیمت 200 روپے فی من مقرر کی تھی،پنجاب حکومت نے رمضان ریلیف بازار کی ضروریات کا تعین 30 ہزار ٹن کیا تھا،اب پنجاب حکومت 1 لاکھ 55 ہزار ٹن چینی ریلیف بازاروں کیلئے حاصل کر رہی ہے،موجودہ صورت حال میں شوگر مل دیوالیہ ہو جائیں گی،شوگر ملزکے مطابق بینکوں کو قرض کسانوں کو گنے اور حکومت کو ٹیکسوں کی ادائیگی نہیں ہو سکے گی، وزیر خزانہ بطور وزیر صنعت و پیداوار شوگر ملز کے مسائل حل کرنے کیلئے مذاکرات کریں۔

 وزیر خزانہ 

مزید :

صفحہ اول -