وزارت ملنے پر عاطف خان کی رہائش گاہ پر کارکنوں کا جم غفیر رہا 

      وزارت ملنے پر عاطف خان کی رہائش گاہ پر کارکنوں کا جم غفیر رہا 

  

مردان (بیورورپورٹ) چودہ ماہ بعد مردان بھی دوبارہ وزارت مل گئی محمد عاطف خان کی رہائش گاہ پر کارکنوں کا جم غفیر رہا،صوبائی وزیر کو ہارپہنائے گئے اور سارادن مبارک باددینے والوں کا تانتا باندھا رہا چودہ ماہ قبل وزیراعلیٰ محمود خان سے بعض اختلافات کے بعد محمد عاطف خان کو کابینہ سے علیٰحدہ کردیاگیاتھااس عرصے میں انہوں نے اپنی زیادہ تر سیاسی سرگرمیاں ترک کرکے خاموشی اختیا رکررکھی تھیں متعدد حلقوں کی طرف سے شروع میں ان کی سیاسی مستقبل پر سوالات اٹھانے کے ساتھ ساتھ کسی دوسری پارٹی میں شمولیت کی بھی افواہیں پھیلائی گئیں لیکن محمد عاطف خان ثابت قدم رہے اور اس عرصے میں اپنی پارٹی کے خلاف ایک لفظ بھی نہ بولے سینٹ کے انتخابات کے دوران جب ان کی وفاداری کا امتحان آیا تو نہ صرف وہ بلکہ ان کے متمد خاص ظاہر شاہ طورو سمیت دیگر ہم خیال ایم پی ایز بھی اس آزمائش پر پورا اترے اورمخالف جماعتوں کے تمام آفرز کو ٹھکرادیا کابینہ کے پہلے دور میں عاطف خان کے پاس کھیل وسیاحت،آثار قدیمہ سمیت دیگر پانچ محکموں کے قلمدان تھے جبکہ پی ٹی آئی کے پہلے دور حکومت میں وہ پرویز خان خٹک کی کابینہ میں سینئر وزیرتعلیم رہے دونوں ادوار میں انہوں نے اپنی وزارتوں میں نئے اصلاحات متعارف کرائیں اورکامیابی کے ساتھ چلائے منگل کے روزانہیں دوبارہ کابینہ میں شمولیت کا موقع دیاگیا عوام نے توقع ظاہر کی ہے کہ حکومت کی طرف سے محمد عاطف خان کی دوبارہ کابینہ میں شمولیت کے فیصلے سے مردان کی محرومیوں کا کافی حدتک ازالہ ہوجائے گا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -