اگر کوئی روزہ دار بھول کر کھا پی رہا ہو تو کیا اس کو روکنا درست ہے؟

اگر کوئی روزہ دار بھول کر کھا پی رہا ہو تو کیا اس کو روکنا درست ہے؟
اگر کوئی روزہ دار بھول کر کھا پی رہا ہو تو کیا اس کو روکنا درست ہے؟

  

روزے میں کچھ باتیں ایسی ہیں جن سے روزہ نہیں ٹوٹتا جن میں غلطی سے کھانا پینا بھی شامل ہے۔ اگر روزہ دار بھول کر کچھ کھا پی لے یا بھولے سے صحبت ہوجائے تو اس کا روزہ نہیں گیا ۔ بھول کر پیٹ بھر کر کھا پی  لے تو بھی روزہ نہیں ٹوٹتا۔ اگر بھول کر دن میں کئی بار کھا پی لیا تو بھی روزہ نہیں ٹوٹتا۔

بعض لوگ مسئلے کا پتہ نہ ہونے کے باعث بھول کر کھانے کے بعد قصداً بھی کھا پی لیتے ہیں جس سے نہ صرف روزہ ٹوٹ جاتا ہے بلکہ کفارہ بھی لازم ہوجاتا ہے۔

ایک شخص کو بھول کر کھاتے ہوئے دیکھا تو اگر وہ اس قدر طاقتور ہے ہک روزے سے زیادہ تکلیف نہیں ہوتی تو روزہ یاد دلانا واجب ہے اور اگر اس شخص میں روزہ رکھنے کی قوت و طاقت نہ ہو اور روزہ رکھنے سے تکلیف ہوتی ہو تو اس کو یاد نہ دلایا جائے۔

مزید :

Ramadan -Ramadan News -روشن کرنیں -