تین دن بعد خیال آہی گیا، آئی جی پنجاب مظاہرین کے تشدد سے زخمی ہونے والے اہلکاروں کی عیادت کرنے ہسپتال پہنچ گئے

تین دن بعد خیال آہی گیا، آئی جی پنجاب مظاہرین کے تشدد سے زخمی ہونے والے ...
تین دن بعد خیال آہی گیا، آئی جی پنجاب مظاہرین کے تشدد سے زخمی ہونے والے اہلکاروں کی عیادت کرنے ہسپتال پہنچ گئے

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )انسپکٹر جنرل (آئی جی )پنجاب پولیس  انعام غنی تین دن بعد تحریک لبیک  کے مظاہرین کے تشدد سے زخمی ہونے والے پولیس اہلکاروں کی عیادت کے لیے ہسپتال پہنچ گئے۔

آئی جی پنجاب نے زخمی افسران و اہلکاروں کوامدادی چیک اور پھول پیش کئے۔ انکا کہنا تھا کہ پیشہ ورانہ فرائض کی ادائیگی میں جانوں کا نذرانہ پیش کرنے اور زخمی ہونے والے افسران و اہلکار پنجاب پولیس کے ہیرو ہیں۔پنجاب پولیس عوام کی جان و مال کے تحفظ اور ا سٹیٹ کی رٹ برقرار رکھنے میں کسی قربانی سے دریغ نہیں کرے گی۔  پنجاب پولیس جس کا نصب العین شہریوں کی جان و مال کے تحفظ اورقانون و اسٹیٹ کی رٹ برقرار رکھنا ہے اور اس مقدس مشن کی ادائیگی میں پولیس افسران واہلکاروں نے کبھی بھی کسی قربانی سے دریغ نہیں کیا۔ معاشرے میں امن و امان کی فضا خراب کرنے اور شاہرات پر آمدو رفت بلاک کرکے نقص امن پیدا کرنے والے شرپسندعناصر کسی رعائیت کے مستحق نہیں اورقانون کو ہاتھ میں لینے والے ایسے شر پسند وں کے خلاف بلا امتیاز قانونی کاروائی کی جائے گی۔

 انہوں نے مظاہروں میں زخمی ہونے والے اہلکاروں سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ عوام کے جان و مال کے تحفظ کے لیے جس جذبے سے آپ نے فرائض سرانجام دیے وہ پوری فورس کیلئے قابل فخر ہے، جس ہمت اور جوش و جذبے سے آپ نے اپنی جانوں کی پروا کیے بغیر فرض کی ادائیگی کو ترجیح دی یہ اس بات کا ثبوت ہے کہ عوام کے جان ومال کا تحفظ پنجاب پولیس کی اولین ترجیح ہے۔   سی سی پی او لاہور غلام محمود ڈوگر نے آئی جی پنجاب کو زخمیوں کی دی جانے والے طبی امداد اور انکے صحت و علاج معالجے بارے آگاہ کیا۔ آئی جی پنجاب نے زخمی اہلکاروں کی صحت بارے ڈاکٹرز سے استفسار کیااور زخمی پولیس افسران کو بہترین علاج معالجے کی سہولیات دینے کی تاکید کی۔

مزید :

قومی -