حالات متقاضی ہیں کہ سیاستدان پھونک پھونک کر قدم اٹھائیں:صدر ممنون حسین

حالات متقاضی ہیں کہ سیاستدان پھونک پھونک کر قدم اٹھائیں:صدر ممنون حسین
حالات متقاضی ہیں کہ سیاستدان پھونک پھونک کر قدم اٹھائیں:صدر ممنون حسین

  

 اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک )صدر ممنون حسین نے کہا ہے کہ ملک کے حالات اس بات کے متقاضی ہیں کہ سیاست دان پھونک پھونک کر قدم اٹھائیں۔ ایوان صدر اسلام آباد میں جشن آزادی کی خصوصی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر مملکت کا کہنا تھا کہ قوم یکسو ہوکر افواج پاکستان کی پشت پر کھڑی ہو تاکہ دہشتگردی کا خاتمہ ہوسکے، افراتفری اور تشد د جیسی صورتحال سنجیدہ رویے کا تقاضہ کرتی ہے، سیاسی قائدین دانشمندانہ طرز عمل اختیار کریں۔ صدر ممنون حسین نے کہا کہ پاکستان کسی ملک کے خلاف نہیں ہے، تمام پڑوسی ممالک سے دوستی اور برابری کے تعلقات رکھنا چاہتے ہیں، کشمیری اور فلسطینی عوام کو جلد از جلد حق خود ارادیت ملنا چاہیے۔ صدر نے کہا کہ ایسا طرز عمل اختیارکرناچاہیے جس سے دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکا جائے،ملکی پالیسی کسی لسانی یا فرقہ وارانہ بنیاد پر نہیں ،برابری پر ہونی چاہیے،اگر سیاستدان مہم جوئی نہ کریں تو ملک مثالی ترقی کرسکتا ہے، ہم آئین اور قانون کی عملداری کو یقینی بنالیں تو مسائل ختم ہوجائیں گے۔ صدر مملکت کا کہنا تھا کہ توانائی منصوبوں کی تکمیل سے ملک اندھیروں سے نکل آئےگا۔آئی ڈی پیز کا ذکر کرتے ہوئے صدر نے کہا کہ بے گھر ہونےوالے قبائلیوں نے بڑی قربانیاں دی ہیں،قبائلیوں کیلئے ایسے انتظامات کیے جائیں کہ وہ عزت سے گھروں کو واپس جاسکیں۔ انہوں نے کہا کہ چائنا پاکستان اکنامک کوریڈور پر تیزی سے کام جاری ہے،یہ منصوبہ پورے خطے میں خوشحالی لائے گا، ملک کی تقدیر بدلنے والے منصوبوں میں کوئی رکاوٹ نہ ڈالی جائے۔ اس سے قبل جشن یوم آزادی کے سلسلے میں پرچم کشائی کی مرکزی تقریب ایوان صدر میں منعقد کی گئی جس کے مہمانان خصوصی صدر ممنون حسین اور وزیر اعظم نواز شریف تھے ،تقریب میں تینوں مسلح افواج کے سربراہان نے بھی شرکت کی ، وفاقی وزراءاور ارکان پارلیمنٹ بھی اس موقع پر موجود تھے ۔تقریب کاآغاز تلاوت قرآن مجید سے کیا گیا جس کے بعد ملک بھر میں سائرن بجائے گئے اور ٹریفک کو روک دیا گیا،تقریب کے دوران آپریشن ضرب عضب کے شہدا کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لیے ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی ۔

مزید : اسلام آباد /اہم خبریں