نامزد گورنر سندھ عمران اسماعیل بھی ”فراڈئیے“ نکلے، ان کیخلاف کب اور کتنے لاکھ روپے کا مقدمہ درج ہوا؟ ایسی تفصیلات سامنے آ گئیں کہ عمران خان کو بھی یقین نہیں آئے گا

نامزد گورنر سندھ عمران اسماعیل بھی ”فراڈئیے“ نکلے، ان کیخلاف کب اور کتنے ...
نامزد گورنر سندھ عمران اسماعیل بھی ”فراڈئیے“ نکلے، ان کیخلاف کب اور کتنے لاکھ روپے کا مقدمہ درج ہوا؟ ایسی تفصیلات سامنے آ گئیں کہ عمران خان کو بھی یقین نہیں آئے گا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ملتان (ڈیلی پاکستان آن لائن) صوبہ سندھ کیلئے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے نامزد گورنر عمران اسماعیل ملتان پولیس کے مقدمے میں نامزد ملزم نکلے۔ ان کیخلاف تھانہ ممتاز آباد میں 40 لاکھ روپے کا چیک ڈس آنر ہونے کا مقدمہ درج ہوا تھا ۔

نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق عمران اسماعیل کے کیخلاف 2010ءمیں مقدمہ درج ہوا جس کے بعد دوسرا تھانہ قائم ہونے پر ایف آئی آر وہاں منتقل کر دی گئی۔ ایف آئی آر کے مطابق عمران اسماعیل کیلیفورنیا نیچرل پراڈکٹس نامی ایک کمپنی کے ڈائریکٹر تھے جس نے ملتان کے تاجر جمیل اختر سے ٹیٹرا پیک جوس اور دودھ کی ڈسٹری بیوشن کیلئے 40 لاکھ وصول کئے تاہم ڈسٹری بیوشن نہ دینے پر 20,20 لاکھ روپے کے دو چیک دئیے گئے۔

رپورٹ کے مطابق 20,20 لاکھ روپے کے مالیت کے دئیے جانے والے چیک پر عمران اسماعیل اور ندیم حسنین نامی شخص کے دستخط ہیں جو ڈس آنر ہو گئے تو تاجر نے دونوں کے خلاف مقدمہ درج کروایا جبکہ پولیس تفتیش میں عمران اسماعیل اور ان کے ساتھی ندیم حسنین کو عدم پتہ قرار دے چکی ہے۔

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /پنجاب /ملتان /سندھ /کراچی